پاکستان میں چینی سرمایہ کاری کی حفاظت پاک فوج کس طرح کرے گی؟ تفصیلات سامنے آگئیں، جان کر آپ کو بھی بے حد خوشی ہوگی

پاکستان میں چینی سرمایہ کاری کی حفاظت پاک فوج کس طرح کرے گی؟ تفصیلات سامنے ...
پاکستان میں چینی سرمایہ کاری کی حفاظت پاک فوج کس طرح کرے گی؟ تفصیلات سامنے آگئیں، جان کر آپ کو بھی بے حد خوشی ہوگی

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) شمال مغربی چین سے گوادر تک پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کی حفاظت پاکستان کے لیے ایک چیلنج ہے، تاہم پاک فوج اس اہم ترین منصوبے کی حفاظت کے لئے ایسے شاندار انتظامات کر رہی ہے کہ دشمن اس منصوبے کی طرف آنکھ بھی اٹھائے گا تو اس پر کپکپی طاری ہو جائے گی ۔

پاک فوج اور دیگر سکیورٹی ادارے گوادر شہر کی سکیورٹی کو مکمل طور پر فول پروف بنا چکے ہیں۔ وہاں فوج اورپولیس کے سینکڑوں جوان تعینات کیے جا چکے ہیں اور نئے چیک پوائنٹس بنائے جا چکے ہیں۔ عالمی خبررساں ادارے نے پاک فوج کے ان انتظامات کو دیکھتے ہوئے لکھا ہے کہ گوادر شہر کو ایک قلعے کی طرح محفوظ بنا دیا گیا ہے۔ پاک فوج کی منصوبہ بندی کے تحت راہداری روٹ پر تعمیر شروع ہونے کے بعد چیک پوسٹس کے ساتھ ساتھ فوج و پولیس کے دستے بھی تشکیل دیئے جائیں گے جو روٹ پر مسلسل گشت کرتے رہیں گے۔

مزید جانئے: نوکری تلاش کرنے والے پاکستانی نوجوانوں کو مائیکروسافٹ نے خوشخبری سنادی، بڑا اعلان کردیا

ریجنل پولیس آفیسر گوادر جعفر خان کا کہنا تھا کہ ”ہمیں اقتصادی راہداری منصوبے کے تحفظ کے لیے 800نئے اہلکار بھرتی کرنے کے احکامات ملے ہیں۔ اس مقصد کے لیے پولیس میں ایک نئی سکیورٹی ڈویژن تشکیل دی جائے گی۔ “ ایک اور سکیورٹی آفیشل نے روئٹرز سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ”پہلے بھی 500نئے پولیس اہلکار بھرتی کیے جا رہے ہیں۔ اس منصوبے کے دفاع کا زیادہ تر دارومدار فوج پر ہے اور اس حوالے سے فوج بھی ایک نئی ڈویژن قائم کر چکی ہے جس میں 13ہزار فوجی جوان شامل ہیں۔

دوسری طرف چین نے پاکستان کی طرف سے کیے جانے والے سکیورٹی انتظامات پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔ چینی وزیرخارجہ لیو کنگ نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ”اقتصادی راہداری منصوبے میں کافی پیشرفت ہو چکی ہے اور چینی شہریوں، ورکرز، انجینئرز اور اداروں کے تحفظ کے لیے پاکستان نے بھرپور اقدامات کیے ہیں جس کے لیے ہم اس کے شکرگزار ہیں۔“

مزید : قومی