بحرین نے خلیج بادشاہتوں کے مخالف شیعہ رہنماءکاانٹرویو نشر کرنے پر سعودی شہزادے کا ٹی وی چینل بند کردیا

بحرین نے خلیج بادشاہتوں کے مخالف شیعہ رہنماءکاانٹرویو نشر کرنے پر سعودی ...
بحرین نے خلیج بادشاہتوں کے مخالف شیعہ رہنماءکاانٹرویو نشر کرنے پر سعودی شہزادے کا ٹی وی چینل بند کردیا

  


مانامہ(ڈیلی پاکستان آن لائن)خلیج بادشاہتوں کے مخالف شیعہ رہنماءکاانٹرویو نشر کرنے پر پر سعودی شہزادے کے ٹی وی چینل کو بند کردیا گیا ہے۔

سعودی نواز ارب پتی کے نیوز چینل کو بحرینی حکومت نے بند کردیا ہے،بحرین نے العرب نیوز چینل کو اس وقت بند کیا ہے جب منگل کے روز اس پر خلیج بادشاہوں کے مخالف شیعہ رہنماءکا انٹرویو نشر کیا جارہا تھا،دو سال کی مسلسل تلاش کے بعد ایک عمارت میں اس چینل کو آن ایئر کیا گیا تھا پہلے ہی دن اسے بند کردیا گیا ہے۔

اب کوئی بھی آپ کو نامعلوم نمبر سے فون کر کے تنگ نہیں کر سکتا کیونکہ۔۔۔

بحرین کے حکومت نواز اخبار ”الخلیج“کے مطابق اس چینل نے خلیجی ممالک میں مقبول اقدار پر عمل نہیں کیا ہے جس کی وجہ سے اسے24گھنٹے کے اندر ہی بند کردیا گیا ہے۔

نیوز چینل انتظامیہ نے مشرق وسطیٰ میں نئے پڑاﺅ کیلئے گھر کی تلاش کرنے کی ناکام کوشش شروع کردی ہے،بحرین کے اعلیٰ حکام کا کہنا ہے کہ یہ اب مردہ ہوچکا ہے،یہ سٹیشن شہزادہ الولید بن طلال کا ہے جو سعودی خاندان کے اہم فرد ہیں،یہ ریاض کی ایک کمپنی کے بھی چیئرمین ہیں۔

ٹی وی چینل کے بند ہونے سے100سے زائد ملازمین متاثر ہوں گے جن کو نوکریوں سے ہاتھ دھونا پڑا ہے،انتظامیہ نے مزید خرچ برداشت کرنے سے بھی ہاتھ کھڑے کردیے ہیں۔

اگر آپ بھی اپنے بالوں میں شاندار چمک لانا چاہتے ہیں تو اس ایک چیز سے اپنے بالوں کو دھوئیں

واضح رہے بحرین سعودی عرب کا اتحادی ملک ہے اور اس کی آبادی کی اکثریت سنی مسلک سے تعلق رکھتی ہے۔

مزید : عرب دنیا


loading...