ہائیکورٹ نے 14 بھٹہ مزدوربازیاب کرکے رہا کردیئے

ہائیکورٹ نے 14 بھٹہ مزدوربازیاب کرکے رہا کردیئے

لاہور(نامہ نگار خصوصی )ہائیکورٹ نے 14 بھٹہ مزدوربازیاب کرکے رہا کردیئے۔جن میں8بچے، 4خواتین اور2مرد شامل ہیں۔جسٹس چودھری عبدالعزیزنے فریادعلی کی درخواست پرسماعت کی۔وکیل نے موقف اختیارکیاکہ گوجرانوالہ کے علاقے میں بھٹہ مالک اعظم اوراحسان درخواست گزارکی بیوی بچوں سمیت 14افرادکو حبس بے جامیں رکھ کر جبری مشقت لے رہا ہے۔حبس بے جا میں رکھے جانے والوں کی اکثریت بچوں کی ہے۔وکیل کا کہناتھا کہ خواتین اوربچوں سے جبری مشقت لی جاتی ہے اورانہیں علاج معالجہ کی سہولت بھی فراہم نہیں کی جاتی۔عدالتی حکم پرکوٹ لدھے کی پولیس نے 4 خواتین ، دو مردوں اور8بچوں کوبازیاب کرکے عدالت پیش کیا۔عدالت میں بھٹہ مالکان اعظم اوراحسان کے وکیل کا کہناتھا کہ ان مزدوروں نے دولاکھ روپے ایڈوانس رقم لے رکھی ہے، جبری مشقت لینے کاالزام بے بنیاد ہے۔عدالت نے فریقین کے دلائل سننے کے بعد بازیاب ہونے والے شہریوں کو رہا کرنے کاحکم دے دیا۔

مزید : علاقائی


loading...