قتل کے مجرم محمد یاسین کی سزائے موت عمر قید میں تبدیل

قتل کے مجرم محمد یاسین کی سزائے موت عمر قید میں تبدیل

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائی کورٹ نے خاتون کے قتل کے مقدمہ کے مجرم فاروق آباد کے محمد یاسین کی سزائے موت کوعمر قید میں تبدیل کردیاہے۔عدالت میں مجرم کی جانب سے وکیل صفائی نے موقف اختیارکیا کہ تھانہ صدر فاروق آبادضلع شیخوپورہ میں 7اکتوبر 2010ء کو طیبہ بی بی کے قتل کا تین ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرایاگیا۔ٹرائل کورٹ نے گواہوں کے بیانات میں تضاد ہونے کی وجہ سے دوملزمان کو بری کیا۔ٹھوس شواہد نہ ہونے کے باوجوٹرائل کورٹ نے محمدیاسین سزائے موت کی سزا سنائی،وکیل نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ شہادتوں سے وجہ عناد ثابت نہیں ہوتی۔مدعی مقدمہ نے پرانی دشمنی کی بناء پر مقدمہ میں ملوث کیا۔وکیل صفائی نے عدالت سے استدعا کی کہ ٹرائل کورٹ کے طرف سے دی گی سزا کالعدم کر کے مجرم کو بری کیا جائے۔ڈپٹی پراسیکیوٹرجنرل پنجاب نے اپیل کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ مجرم کے خلاف ٹھوس شہادتیں موجود ہیں۔پولیس تفتیش،چشم دید گواہوں اور میڈیکل رپورٹ کے مطابق مجرم قصووار ہے۔ہائیکورٹ کے دورکنی بنچ نے فریقین کے دلائل سننے کے بعد تفصیلی فیصلہ سناتے ہوئے قتل کے مجرم محمد یاسین کی سزائے موت کوعمر قید میں تبدیل کردیا۔

مزید : علاقائی


loading...