ڈی جی نیب ملتان کی معاونت سے150مربع سرکاری اراضی پر قبضے کا انکشاف

ڈی جی نیب ملتان کی معاونت سے150مربع سرکاری اراضی پر قبضے کا انکشاف

ملتان(نمائندہ خصوصی)مسلم لیگ(ق) کے ایم این اے طارق بشیر چیمہ نے قومی اسمبلی میں تقریر کے دوران انکشاف کای ہے کہ لینڈ مافیا نے منڈی یزمانج میں150روپے سرکاری اراضی(بقیہ نمبر40صفحہ7پر )

پر قبضہ کرلیا ہے اور ڈی جی نیب ملتان بیورو قبضہ گروپ کی معاونت کررہے ہیں انہوں نے کہا ڈی جی نیب ملتان بیورو نے اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے محکمہ انہار کے افسران کو مجبورکیا کہ قبضہ گروپ کا نہری پانی منظور کریں ایری گیشن ڈیپارٹمنٹ بہاولپور کو نیب کے ذریعہ بلیک میل کرنے کی کوشش کی انہوں نے کہا میری مداخلت سے قبضہ گروپ کا سرکاری پانی تو منظور نہیں ہوا لیکن اربوں روپے مالیت کی سرکاری اراضی لینڈ مافیا کے قبضہ میں ہے۔نیب ترجمان عاصم رضا نے کہا ہے کہ ایم این اے طارق بشیر چیمہ نے اسمبلی فلور پر جو بیان دیا ہے وہ صرف سیاسی شہر حاصل کرنے کی کوشش ہے انہوں نے کہا فاضل ممبر قومی اسمبلی 15دسمبر 2016ء کو2:29 پر نیب ملتان آفس آئے اور ایک گھنٹہ بعد واپس روانہ ہوگئے۔ڈائریکٹر جنرل نیب پر ڈپٹی پراسکیوٹر جنرل نیب نے انوسٹی گیشن افسران کی موجودگی میں ان کا موقف سنا ہے اور کہا کہ وہ اپنے تحفظات کا اظہار ایک درخواست کی صورت میں کرسکتے ہیں،نیب ملتان بیورو قانون کے مطابق کارروائی کرے گا۔انہوں نے کہا نیب ملتان بیورو غریب کسانوں کو پانی کی عدم فراہمی کے کیس کی انکوائری کررہا ہے۔ان کسانوں کی اراضی ایم این اے طارق بشیر چیمہ کی اراضی کے نزدیک واقع ہے غریب کسانوں کا حق کسی صورت نہیں مارنے دیا جائے گا۔دوسری جانب معلوم ہوا ہے فاضل ممبر قومی اسمبلی نے جس سرکاری اراضی کاذکر کیا وہ منڈی یزمان کے علاقے شاہی والا میں واقع ہے150مربع سرکاری اراضی پر قبضہ گروپ نے پانی کی واری بندی منظور کرانے کی کوشش کی اس قبضہ گروپ کو مقامی سیاست دانوں کی بھی حمایت حاصل ہے۔اس حوالے سے جب ایم این اے طارق بشیر چیمہ سے بات کی گئی تو انہوں نے قبضہ گروپ کی نشاندہی کرنے سے انکار کردیا اور نہ ہی لینڈ مافیا کا نام بتایا ان کا تمام زور صرف اس بات پر تھا کہ ڈائریکٹر جنرل نیب سے تمام تفصیلات حاصل کیں جائیں۔جب انہیں بتایا گیا کہ آپ نے فلور پر اس قبضہ گروپ کی نشاندہی کی ہے لیکن ان کے نام لینے سے گریزاں کیوں ہیں تو انہوں نے کہا میں میڈیا کو جواب دہ نہیں ہوں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...