لاہور ہائیکورٹ نے کینسر میں مبتلا عمر قید کے قیدی کو ضمانت پر فوری رہا کرنے کا حکم دے دیا

لاہور ہائیکورٹ نے کینسر میں مبتلا عمر قید کے قیدی کو ضمانت پر فوری رہا کرنے ...
لاہور ہائیکورٹ نے کینسر میں مبتلا عمر قید کے قیدی کو ضمانت پر فوری رہا کرنے کا حکم دے دیا

  


لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے کینسر میں مبتلا عمر قید کے قیدی کو ضمانت پر فوری رہا کرنے کا حکم دے دیاہے ۔جسٹس طارق عباسی کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے عمر قید کے قیدی ایاز احمد کی درخواست ضمانت پر سماعت کی.

پی ایس ایل میچز انٹرنیٹ پر دیکھنے کے خواہشمندوں کو کوئٹہ گلیڈی ایٹرزاور ٹیپ میڈ ٹی وی نے انتہائی شاندار خوشخبری سنا دی ،بہترین سروس متعارف کروا دی

قیدی کی طرف سے عابد ساقی ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ ٹرائل کورٹ نے 2افراد کے قتل میں ایاز احمد کو عمر قید کی سزا سنائی ہے، دوران قید ایاز احمد کینسر کے مرض میں مبتلا ہو گیا اور اب اس کا مرض آخری مرحلے پر ہے جس کا شیخ زید ہسپتال میں علاج جاری ہے، سپریم کورٹ کے فیصلوں کے مطابق کینسر جیسی بیماریوں میں مبتلا قیدیوں کی انسانی ہمدردی کی بنیاد پر ضمانتیں منظور کی جاسکتی ہیں، قتل کیس کا مدعی محمد کاشف بھی دو رکنی بنچ کے روبرو پیش ہوا اور موقف اختیار کیا کہ اس نے کینسر کے مرض میں مبتلا ایاز احمد کو معاف کر دیا ہے، عدالت اگر قیدی کی ضمانت منظور کر لے تو اسے کوئی اعتراض نہیں ہوگا، عدالت نے تفصیلی دلائل سننے کے بعد درخواست ضمانت منظور کرتے ہوئے قیدی کو 5،5لاکھ روپے کے مچلکوں کے عوض رہا کرنے کا حکم دے دیا ہے ۔

مزید : لاہور


loading...