مبینہ جعلسازی کیس ‘ حنا ربانی کھر بھائی ‘ والد ‘ والدہ سمیت انکوائری کیلئے آج دوبارہ طلب

مبینہ جعلسازی کیس ‘ حنا ربانی کھر بھائی ‘ والد ‘ والدہ سمیت انکوائری کیلئے ...

  

مظفرگڑھ( نمائندہ خصوصی)مبینہ جعلسازی سے 5 ہزار کنال سے زائد اراضی نام کرانے پر سابق وزیر خارجہ حناربانی کھر،انکے بھائی ممبرقومی اسمبلی رضاربانی کھر،والد نورربانی کھر اور والدہ سمیت خاندان کے 28 افراد کیخلاف تھانہ انٹی کرپشن میں درج مقدمے کی انکوائری آج دوبارہ ہوگی.تفصیلات کیمطابق محکمہ انٹی کرپشن میں سابق وزیر خارجہ حناربانی کھر اور انکے خاندان کیخلاف درج مقدمے(بقیہ نمبر43صفحہ12پر )

کی انکوائری آج محکمہ انٹی کرپشن کی جے آئی ٹی کرے گی،تھانہ انٹی کرپشن مظفرگڑھ میں حناربانی کھر کے بڑے بھائی عبدالخالق کھر کی مدعیت میں سابق وزیرخارجہ حناربانی کھر،بھائی پیپلز پارٹی کے ممبرقومی اسمبلی رضا ربانی کھر،والد نورربانی کھر،والدہ سمیت خاندان کے 28 افراد کیخلاف درج ہے،مقدمے کے مطابق حناربانی کھر کے والد نورربانی کھر نے جعلسازی سیاپنی پہلی بیوی زیب النساء4 کی 5 ہزار کنال سے زائد اراضی بوگس انتقالات کے ذریعے اپنی دوسری بیوی اور بچوں کے نام کرائی.معاملے کی انکوائری ڈپٹی ڈائریکٹر انٹی کرپشن خالدشاہ اور سرکل آفیسر انٹی کرپشن وسیم اکبرلغاری پر مشتمل جوائنٹ انوسٹی گیشن ٹیم کررہی ہے،4 فروری کو ہونے والی گزشتہ سماعت کے موقع پر طلبی کے باوجود بھی سابق وزیرخارجہ حناربانی کھر،انکے بھائی ممبرقومی اسمبلی رضا ربانی کھر،والد اور خاندان کے دیگر افراد جوائنٹ انوسٹی گیشن ٹیم کے سامنے پیش نہ ہوئے.گزشتہ سماعت کے موقع پر محکمہ مال کا عملہ انوسٹی گیشن پیش ہوا تھا،عملے نے ٹیم کو آگاہ کیا تھا کہ محکمہ مال کے ریکارڈ کیمطابق حناربانی کھر کے خاندان کی جانب سے پیش کیے گئے موضع پتل منڈا میں موجود اراضی کے 4 انتقالات کا کوئی ریکارڈ محکمہ مال میں موجود ہی نہیں.محکمہ مال سے انٹی کرپشن نے موضع کھر غربی میں موجود زمین کے مزید 30 انتقالات کا ریکارڈ طلب کیاتھا جس کے متعلق محکمہ مال کی جانب سے رپورٹ آج جے آئی ٹی کے سامنے پیش کیے جانے کا امکان ہے،انٹی کرپشن حکام کیمطابق حناربانی کھر،انکے بھائی اور والد سمیت دیگر افراد کو آج دوبارہ طلب کیاگیا ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -