پی ایچ انتظامیہ ملازمین کش پالیسی پر گامزن مزید 100ملازمین پر برطرفی کی تلوار لٹک گئی

پی ایچ انتظامیہ ملازمین کش پالیسی پر گامزن مزید 100ملازمین پر برطرفی کی تلوار ...

  

ملتان ( سپیشل رپورٹر ) پی ایچ اے ملتان میں وزیر اعظم پاکستا ن کے گرین پاکستا ن اور فراہمی روز گا ر ویژن کو مبینہ طور پر ناکام بنا نے کا آ غاز کر دیا گیا ہے۔ ملتان کو سر سبز و شاداب رکھنے کے ذمہ دار ادارے پی ایچ اے میں گز شتہ دنو ں 80 افسرا ن اور اہلکا رو ں کو نو کر ی سے نکا ل دیا گیا ہے جبکہ دوسر ی کھیپ میں 100 مزید ملاز مین کو بے روزگار کرنے کی تیاری کر لی گئی ہے اس عمل سے ملازمین میں بے چینی پائی جا رہی ہے جبکہ کنٹریکٹ میں توسیع نہ ملنے(بقیہ نمبر16صفحہ12پر )

پر ملازمین بے روزگاری کا عذاب جھیل رہے ہیں۔ اس ضمن میں پارکس اینڈ ہارٹیکلچراتھارٹی ( پی ایچ اے ) میں گریڈ ایک سے 17تک کے 77ملازمین جن کے کنٹریکٹ کی مدت 18جنوری 2019ء کو ختم ہوچکی ہے کے کنٹریکٹ میں تاحال توسیعی نہیں کی گئی اور نہ ہی انھیں نوکری پر بحال رہنے کی کوئی یقین دہانی کرائی گئی ہے جبکہ دوسرے مرحلہ میں مزید 100ملازمین جن کے کنٹریکٹ مارچ میں ختم ہورہے ہیں کو بھی نوکری سے فارغ کئے جانے کی افواہیں سرگرم ہیں ۔مذکورہ صورتحال کے پیش نظر افسران و ملاز مین کی کمی کے باعث ملتان کی گرین بیلٹس اور تفریحی پا رکس اجڑنے لگے برطرفی ملازمین کا کہنا ہے کہ پی ٹی آ ئی کے مقا می اراکین قومی وصو با ئی اسمبلی اس معاملے پر خا موشی اختیا ر کئے ہو ئے ہیں۔وزیر خارجہ شاہ محمود قر یشی کو بھی اس معاملہ میں لاعلم رکھا گیا ہے فارغ ہونے والے پی ایچ اے ملازمین اور افسران کا کہنا ہے کہ پی ایچ اے کے ملازمین کو فارغ کر کے دیگر اداروں سے مستعار لئے گئے افسرا ن سے آ خر کب تک کام چلا یا جا ئے گا نوکریوں سے نکا لے جانے والے پی ایچ اے کے بے چین ملاز مین نے وزیر اعظم پاکستان عمران خان۔وزیر اعلی پنجاب عثمان بزذار اور ملتان ڈویژن اور ضلع کے انتظامی افسران سے موجودہ صورتحا ل کا فو ری نو ٹس لینے اور ملاز مین کے کنٹر یکٹ میں توسیع کا مطا لبہ کیا ہے۔دوسر ی طر ف محکمہ کے ترجما ن کا کہنا ہے کہ ادا ر ہ مالی مشکلا ت کا شکا ر ہے اور ڈائریکٹر جنرل پی ایچ اے علی اکبر بھٹی عمرہ کی ادائیگی کے لیے گئے ہوئے تھے ۔ ان کی واپسی ہوچکی ہے مگر وہ 9فروری 2019ء کو اپنے عہدے کا دوبارہ چارج سنبھالیں گے جس کے بعد ہی کنٹریکٹ ملازمین کی ملازمت میں توسیع بارے کوئی فیصلہ کیا جا سکتا ہے۔

پی ایچ اے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -