پاکستان میں سلامتی کونسل کی قراردادپر دو دہشت گردوں پر پابندی عائد

    پاکستان میں سلامتی کونسل کی قراردادپر دو دہشت گردوں پر پابندی عائد

  



اسلام آباد (این این آئی)پاکستان نے سلامتی کونسل کی قراردادوں پر عملدرآمد کا فیصلہ کرتے ہوئے مزید دو عالمی دہشتگردوں پر مکمل پابندی عائد کر دی،دہشتگردوں میں امادو بیری، امادہ کوفہ شامل، تعلق مالی، تنظیم نصرت الاسلام و المسلمین سے ہے، دونوں دہشت گرد سلامتی کونسل کی خصوصی کمیٹی کی فہرست میں شامل ہیں۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق نصرت الاسلام و المسلمین مغربی افریقہ میں قائم عسکریت پسند تنظیم ہے، دونوں دہشتگردوں کے پاکستان داخلے، بطور راہداری استعمال پر پابندی عائد کر دی گئی،دہشتگردوں کے ہر قسم کے اثاثہ جات منجمد، اسلحے کی فروخت پربھی قدغن ہوگی،پاکستان کا کوئی فرد، ادارہ یا تنظیم کسی قسم کی مالی معاونت نہیں کر سکے گا،پاکستان کے بینکنگ، نان بینکنگ، اسٹاک مارکیٹ ذرائع کیساتھ مالی و معاشی تعلقات استوار نہیں ہو سکیں گے،پاکستان سے کوئی فرد یا ادارہ چندے کے ذریعے فنڈز اکھٹا نہیں کر سکے گا۔سلامتی کونسل کی داعش، القاعدہ پابندیوں کی کمیٹی نے 4 فروری کو دونوں دہشتگردوں کو فہرست میں شامل کیا،دہشتگردوں کے تمام افراد، گروپس اور اداروں کے فنڈز، اثاثے یا معاشی وسائل فوری منجمد ہوں گے۔وزارت خارجہ نے حکم نامے میں سلامتی کونسل کی 15 قراردادوں کا حوالہ دیا۔پابندی کا فیصلہ، سلامتی کونسل کی قرارداد 2368 (2017) کے پیراگراف 1، چارٹر باب 7 کے تحت کیا گیا۔ جبکہ قراردادوں کے تحت تمام ممالک داعش اور القاعدہ، وابستہ افراد، گروہوں اور اداروں کے خلاف اقدامات کے پابند ہیں۔

پابندی عائد

مزید : پشاورصفحہ آخر