معاون خصوصی عارف احمد زئی کے زیر صدارت اجلاس کا انعقاد

    معاون خصوصی عارف احمد زئی کے زیر صدارت اجلاس کا انعقاد

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)وزیراعلی خیبرپختونخوا کے معاون خصوصی برائے معدنیات عارف احمدزئی کی زیر صدارت شبقدر بیوٹیفیکیشن کے حوالے سے اعلی سطحی اجلاس سول سیکرٹریٹ پشاور میں منعقد ہوا۔ شبقدر کی علاقائی اہمیت اور یہاں پر بڑھتی ہوئی کاروباری سرگرمیوں سے شہر کی متاثر ہوتی ہوئی ماحول پر بات کرتے ہوئے عارف احمدزئی نے کہا کہ شبقدر ضلع مہمند، باجوڑ اور پشاور کے مابین ایک رابطہ مقام ہے جہاں سے ان تمام اضلاع کو تجارتی مواد منتقل ہوتے ہیں، جس سے یہاں کے سڑکوں، بازاروں اور دیگر سہولیات کی مقدار اور معیار پر فرق پڑھ رہا ہے جبکہ قدرتی خوبصورتی بھی متاثر ہو رہی ہے۔موجودہ حکومت کئی چیلنجز کے باوجود شبقدر کی خوبصورتی بارے دیرپا اقدامات اٹھا رہی ہے جس کا بنیادی مقصد شہر کی خوبصورتی برقرار رکھنا ہے۔ انہوں نے اجلاس میں شریک متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ جلد از جلد اس حوالے سے فریم ورک تیار کیا جائے اور تمام سٹیک ہولڈرز کو اپنے ساتھ شامل کیا جائے۔ سکولوں کے طلباء اور نوجوانوں سمیت عام شہریوں سے بھی اسی بارے رائے اور مشورہ لیا جائے تاکہ شبقدر کی سالوں پرانی خوبصورتی واپس لانے کی جانب پیش رفت تیز ہو۔ماحولیاتی آلودگی اور وزیراعظم عمران خان کے وژن 'پاک پاکستان' پر ریمارکس دیتے ہوئے معاون خصوصی برائے معدنیات عارف احمدزئی نے واضح کیا کہ وزیراعظم عمران خان نہ صرف ملکی معیشت پر توجہ دئیے ہوئے ہیں بلکہ ماحول کی خوبصورتی بھی ان کی ترجیحات میں شامل ہے۔ ہم سب نے اسی وژن کو لے کر علاقائی خوبصورتی کو برقرار رکھنا اور ماحولیاتی تبدیلیوں سے دور رہنا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت خیبر پختونخوا کی تاریخ میں پہلی بار شبقدر کو دیگر سہولت یافتہ علاقوں کے ہم پلہ لانے کی کوششیں کر رہی ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر