حکومتی اتحاد کی ناراضگیوں کا فیصلہ کوئی اور کرے گا، اعتزاز احسن

  حکومتی اتحاد کی ناراضگیوں کا فیصلہ کوئی اور کرے گا، اعتزاز احسن

  



لاہور (آن لائن) پیپلز پارٹی کے رہنما چوہدری اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ حکومتی اتحاد کی ناراضگیوں کا فیصلہ کوئی اور کرے گا، حکومت سے ملک کی معیشت سنبھل نہیں رہی، عوام مہنگائی کے باعث حکومت سے تنگ آ چکے ہیں، گیس، بجلی اور تیل کی قیمتوں میں اضافہ منی بجٹ ہے جو حکومت ہر ماہ پیش کرتی ہے، نواز شریف کے دور حکومت میں بھی ہر ماہ منی بجٹ آتے رہے ہیں۔ راشد لطیف میڈیکل کالج کے کانووکیشن کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چوہدری اعتزاز احسن نے کہا کہ یہ امر قابل تشویش ہے کہ پاکستان میں اقتصادی اور معاشی فیصلے کرنے کے مجاز زیادہ تر ایسے لوگ ہیں جن کی ملازمتیں ملک سے باہر ہیں اوربین الاقوامی تنظیموں کے ساتھ ان کا مستقبل جڑا ہوا ہے۔ اس ملک کی بدقسمتی ہے کہ یہا ں معین قریشی اور شوکت عزیز جیسے درآمد شدہ وزرائے اعظم نے حکومت کی۔ معین قریشی پاکستان درآمد کیے گئے اور واپس چلے گئے جبکہ شوکت عزیز درآمد کیے جانے کے بعد حکومت کر کے بھاگ گئے اور اپنی ساس کی وفات کے باوجود واپس نہیں آئے۔ شوکت عزیز پاکستان کو برباد کرنے کے لئے آئے تھے۔ چوہدری اعتزاز احسن نے مریم نواز کو ملک سے باہر بھجوانے سے متعلق ایک سوال پرکہا کہ کسی ملزم کو بیرون ملک کسی کی تیمار داری کے لئے جانے کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔ مریم نواز کو باہر بھجوانا ہے تو اس کے لئے نیا قانون بنانا پڑے گا۔ شریف خاندان کوآپریٹو سکینڈل میں ملوث رہا۔ جس میں اس کے حق میں فیصلہ دیا گیا۔ فیصلہ دینے والے تینوں ججز کو سپریم کورٹ بھیج دیا گیا جبکہ فیصلہ دلوانے والوں سے کسی نے نہیں پوچھا۔

اعتزاز احسن

مزید : صفحہ آخر