انفارمیشن کمشنرز کاعوام تک معلومات کی رسائی کی کوششیں جاری رکھنے کا عزم

  انفارمیشن کمشنرز کاعوام تک معلومات کی رسائی کی کوششیں جاری رکھنے کا عزم

  



لاہو ر(خصوصی رپورٹ)نیشنل فورم آف انفارمیشن کمیشن (این ایف آئی سی) کا دوسرا اجلاس لاہور میں ہوا۔ این ایف آئی سی فیڈرل، کے پی کے، پنجاب اور سندھ کے سروس انفارمیشن کمشنرز پر مشتمل ہے۔ اجلاس میں انفارمیشن کمشنرز نے عوام تک معلومات تک زیادہ سے زیادہ رسائی کیساتھ شفاف اور جوابدہ حکومت کے فروغ کیلئے مشترکہ کوششوں کو جاری رکھنے کا عزم کیا۔پہلے دن عامر اعجاز ایگزیکٹو ڈائریکٹر سی پی ڈی آئی نے، فیڈرل، پنجاب اور کے پی آر ٹی آئی کمیشن کے لینڈ مارک آرڈرز کی تعریف کی اور سندھ اور بلوچستان میں بھی آر ٹی آئی کو چلانے کا مطالبہ اٹھایا۔ مزید یہ کہ انفارمیشن کمیشنوں نے آر ٹی آئی قوانین کے نفاذ کیلئے اپنی پیشرفت اور اقدامات کا تبادلہ کیا۔ فنڈز کی الاٹمنٹ، انفارمیشن کمشنرز کی تقرری میں تاخیر، حکومت سے انتظامی تعاون نہ ہونا، کام کے قواعد کو حتمی شکل دینے میں تاخیر اور اس کے نتیجے میں عملے کی کمی، اطلاعات تک رسای میں مزاحمت اور عوامی اداروں کی نوآبادیاتی ذہنیت جیسے امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔دوسرے دن، این ایف آئی سی کا ایک انٹرایکٹو اجلاس ہوا جس میں چوکیدار سول سوسائٹی، اکیڈمیا، وکلاء اور صحافیوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔ انٹرایکٹو سیشن کے دوران، محبوب قادر شاہ چیف انفارمیشن کمشنر پنجاب، ایم اعظم چیف فیڈرل انفارمیشن کمشنر اور کے پی انفارمیشن کمشنر ریاض خان داؤد زئی نے ریاست کے تمام سطح پر پاکستان میں آر ٹی آئی قوانین کے واضح نفاذ کے شرکاء کے سوالات کے بھر پور جواب دیے۔سی پی ڈی آئی کے بارے میں سینٹر فار پیس اینڈ ڈویلپمنٹ انیشی ایٹوز (سی پی ڈی آئی) ایک آزاد، غیرجانبدار اور غیر منافع بخش رجسٹرڈ سول سوسائٹی تنظیم ہے جو پاکستان میں ترقی اور امن کے امور پر کام کررہی ہے۔

انفارمیشن کمشنرز

مزید : صفحہ آخر