وزیراعلٰی عثمان بزدار کا تاریخی عمارتوں کو اصل حالت میں بحال کرنے کا اعلان

        وزیراعلٰی عثمان بزدار کا تاریخی عمارتوں کو اصل حالت میں بحال کرنے کا ...

  



لاہور(جنرل رپورٹر)وزیراعلی عثمان بزدار نے کہاکہ پنجاب کے دیگر شہروں میں بھی تاریخی عمارتوں کو اس کی اصل حالت میں بحال کیاجائے گا،تاریخی عمارتوں کی بحالی سے شہروں کی خوبصورتی میں بھی اضافہ ہوگااورسیاحت کو فروغ ملے گا، والڈ سٹی لاہور اتھارٹی کا دائرہ کار پنجاب کے ہر شہرتک بڑھائیں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز شاہی قلعہ کادورہ کے دوران بارود خانے میں اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے بارود خانے کی اصل حالت میں بحالی کے پراجیکٹ کا جا ئزہ لیا۔ڈی جی والڈ سٹی آف لاہوراتھارٹی کامران لاشاری نے وزیراعلیٰ عثمان بزدار کو بارود خانے کی اصل حالت میں بحالی کے پراجیکٹ کے بارے میں بریفنگ دی۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے بارود خانے کی اصل حالت میں بحالی کے پراجیکٹ کو سراہا۔ اجلاس میں شاہی باورچی خانے میں ریسٹورنٹ کے قیام کیلئے عدلیہ کی ہدایات کی روشنی میں قواعد و ضوابط کے مطابق مزید اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا گیا۔وزیراعلی نے ہدایت کی کہ عدلیہ،ہیرٹیج بورڈاوریونیسکو کی گائیڈلائنز کی روشنی میں ریسٹورنٹ کے قیام کیلئے آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے۔ وزیراعلی عثمان بزدار نے والڈ سٹی آف لاہوراتھارٹی کے کنٹریکٹ ملازمین کو ریگولر کرنے کی منظوری دی۔اجلاس میں والڈ سٹی آف لاہوراتھارٹی کا دائرہ کار پنجاب بھر میں بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا۔اتھارٹی کا دائر کار بڑھانے کی حتمی منظوری پنجاب کابینہ دے گی۔اجلاس میں والڈ سٹی آف لاہوراتھارٹی کیلئے 250نئی آسامیوں اوروالڈ سٹی آف لاہوراتھارٹی کے ریگولر ملازمین کیلئے 50فیصد الاؤنس دینے کی منظوری دی گئی اور اس ضمن میں سمری محکمہ خزانہ کو بھجوائی جائے گی۔والڈ سٹی آف لاہوراتھارٹی میں کام کرنے والے انجینئرز کو انجینئرنگ و ٹیکنیکل الاؤنس دینے پر غورکیا گیااوراس ضمن میں ایڈیشنل چیف سیکرٹری کی سربراہی میں قائم کمیٹی 15روز میں حتمی سفارشات پیش کرے گی۔اجلاس میں ٹورسٹ گائیڈ زکوگریڈ7کی بجائے گریڈ12دینے کی تجویز منظور کی گئی جبکہ اندورن شہر میں متاثرین کے امورطے کرنے کیلئے کمیٹیوں کو نوٹیفائی کرنے کی منظوری دی گئی۔رم مارکیٹ کو دوسری جگہ منتقل کرنے کا جائزہ لینے کیلئے صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دے دی گئی۔کمیٹی میں تمام محکموں اوراداروں کے سٹیک ہولڈرز شامل ہوں گے۔محکمہ آرکیالوجی کے شاہدرہ کمپلیکس کو والڈ سٹی آف لاہوراتھارٹی کو منتقل کرنے کی تجویز پر غورکیا گیا۔بعدازاں پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ پالیسی اور مانیٹرنگ بورڈ کا دوسرا اجلاس منعقد ہوا جس میں 42 ارب روپے کے پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے منصوبوں پر پیش رفت کا جائزہ لیا گیا۔اجلاس میں لاہور میں واٹر میٹرز لگانے کے پروگرام کی منظوری دی گئی۔اجلاس میں لاہور رنگ روڈ سدرن لوپ تھری کے منصوبے کے کنسیشنل ایگریمنٹ پردستخط کی بھی منظوری دی گئی۔ اس معاہدے پر رواں ماہ دستخط ہوں گے۔لاہور رنگ روڈ سدرن لوپ تھری کا کنٹریکٹ این ایل سی کو ایوارڈ کیا گیا ہے۔پنجاب میں 500 بستروں پر مشتمل 10 نئے ہسپتالو ں کی تعمیر کیلئے ایشیائی ترقیاتی بینک کے ساتھ مفاہمت کی یادداشت پر دستخط کی منظوری دی گئی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے زیرو ویسٹ مٹیریل ریکوری فسیلٹی کی تجویز پر عملدرآمد نہ ہونے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس تجویز پر عملدرآمد کرنا متعلقہ محکمے کی ذمہ داری ہے۔فیصلے کئے جائیں اور آگے کی جانب بڑھا جائے۔فائل کو ادھر ادھر گھمانے سے کام نہیں چلے گا، مجھے آئندہ اجلاس میں اس پر پیش رفت چاہیئے۔ جو بھی رکاوٹ ڈال رہا ہے، اس کو نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا۔ اجلاس میں پنجاب انفراسٹرکچر فنڈ کے قیام کی تجویز پر غورکیاگیا۔اجلاس میں پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ پالیسی اینڈ مانیٹرنگ بورڈ کے بزنس پلان کی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں گندم ذخیرہ کرنے کیلئے بھکر اور لیہ میں بنائے گئے سائلوز کے سالانہ سروس چارجز پر نظرثانی کی درخواست مسترد کردی گئی جبکہ پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ اتھارٹی کیلئے چیف ایگزیکٹو آفیسر عہدے کیلئے ٹی او آرز اور دیگر امور کی منظوری دی گئی۔علاوہ ازیں ایک اور اجلاس میں وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے کوہ سلیمان رینج میں چھوٹے ڈیم بنانے کے منصوبے پر کام کی رفتار تیز کرنے اور ضروری امور جلد نمٹانے کی ہدایت کردی۔ وزیراعلیٰ نے سمال ڈیمز بنانے کیلئے فزیبلٹی اور انجینئرنگ سٹڈی پر کام شروع کرنے کی منظوری دے دی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی ہدایت پر ماہرین نے کوہ سلیمان میں چھوٹے ڈیمز بنانے کیلئے 14 مقامات کی نشاندہی کا کام مکمل کر لیا گیا ہے۔

سردار عثمان بز

مزید : صفحہ اول