ملتان‘ سرائیکی پارٹی کا الگ صوبے کیلئے احتجاجی مظاہرہ‘ تحریک کا دائرہ بڑھانے کا اعلان

  ملتان‘ سرائیکی پارٹی کا الگ صوبے کیلئے احتجاجی مظاہرہ‘ تحریک کا دائرہ ...

  



ملتان (سپیشل رپورٹر) پاکستان کے حکمران بدنیت ہیں آج حکمرانی کے مزے لے رہے ہیں مگر انہیں محروم سرائیکی قوم سے کوئی غرض نہیں سو دن کے وعدہ سے مکْرچکے ہیں ہم(بقیہ نمبر57صفحہ12پر)

انہیں اپنا وعدہ یاد دلاتے رہیں گے ان خیالات کا اظہار پاکستان سرائیکی پارٹی کے مرکزی صدر ملک اللہ نواز وینس نے آج چوک کچہری ملتان میں پاکستان سرائیکی پارٹی کے زیر اہتمام سرائیکستان صوبے کے قیام کے سلسلے سے حکمرانوں کے خلاف احتجاجی مظاہرے سے خطاب کررہے ہیں انہوں نے کہا کہ سرائیکی خطے کی پارٹیز مکمل چپ ساد ھ چکی ہیں بلکہ مخدوم شاہ محمود قریشی اور مخدوم خسرو بختیار نے جو سرائیکی قوم سے سرائیکی صوبے کے نام پر ووٹ حاصل کیے آج سرائیکی قوم کو اکیلے چھوڑ دیا اب سرائیکی قوم مکمل جاگ چکی ہے ہم حکمرانوں سے کہتے ہیں کہ سرائیکی قوم کی امنگوں کے مطابق سرائیکستان صوبہ بنادو ہم ورنہ احتجاج کا دائرہ وسیع کرکے پہلے مرحلے میں لاہور پنجاب اسمبلی کا گہراؤ کریں گے اور دوسرے مرحلے میں اسلام آباد کا گہراؤ کریں گے احمد نواز سومرو چیف آرگنائزر پاکستان سرائیکی پارٹی اور ملک جاوید چنڑ نے کہا کہ سرائیکی قوم کا مزید امتحان نہ لیا جائے اور جلد سرائیکی صوبہ کا قیام عمل میں لایا جائے تاخیر کی صورت میں سرائیکی قوم کی مزہمت حکمرانوں کو مہنگی پڑے گی احتجاجی مظاہرے میں تخت لاہور اور تخت پشور کے خلاف بھر پور نعرے بازی کی گئی اور پنجاب سے آزادی کا مطالبہ کیا گیا مظاہرے کی قیادت ملک اللہ نواز وینس، احمد نواز سومرو اور ملک جاوید چنڑ نے کی جبکہ مظاہرے میں سلطان محمود کلاچی، غلام عباس بوٹہ، حمید خاں بلوچ، شرافت عباس ایڈووکیٹ، شریف خاں مہانہ، ملک یعقوب وینس، اشرف سیال، عبدالرازاق، ملک بلال سندھڑ، ملک کامران مڑل سمیت سینکڑوں کارکنان نے مرکزی حکومت اور پنجاب حکومت کے خلاف بھر پور نعرے بازی کی اور عمران خان سے جلد سرائیکی صوبے کا مطالبہ کیا۔

اعلان

مزید : ملتان صفحہ آخر