راجن پور‘ تحصیل کونسل ملازمین کی تنخواہوں سے جبری وصولی کا انکشاف

  راجن پور‘ تحصیل کونسل ملازمین کی تنخواہوں سے جبری وصولی کا انکشاف

  



راجن پور (ڈسٹرکٹ رپورٹر) تحصیل کونسل راجن پور کے واٹرسپلائی ملازمین کی تنخواہوں سے لاکھوں روپوں کی جبری وصولی پر ملازمین اور لواحقین سراپاء احتجاج بن گئے ،ڈیڑھ سال قبل بھی سابق چیئر مین ضلع کونسل سردارعبدالعزیز خان عرف جگن خان دریشک نے واٹرسپلائی ملازمین سے تنخواہوں کی مد میں کی گئی ایک لاکھ تیس ہزار روپے کی جبری وصولی کی رقم واپس کرائی تھی(بقیہ نمبر35صفحہ12پر)

غریب ملاز مین ولواحقین نے موجودہ ایڈ منسٹریٹر وڈپٹی کمشنر سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ اُن کی تنخواہوں کے بقایا بلز کی آدائیگی کے دوران اُن سے کئی لاکھ روپوں کی جبری وصولی کی گئی ہے ملاز مین کا نام نہ ظاہر کر نے کی شرط پر کہنا تھا کہ انتظا می آفیسران،اکاؤنٹس ودیگر نے مل کر ایک سوستر کے قریب ملاز مین سے فی کس ساڑھے چھ ہزار روپے کے حساب سے جبری وصولی کرکے غریب ملاز مین کو تقریباً آٹھ لاکھ روپے کے مالی نقصان سے دوچار کیا ہے اُن کا کہنا تھا کہ مہنگائی کے اس دور میں غریب ملازم کوملنے والی ماہا نہ تنخواہ سے ہی اخراجات پورے نہیں ہورہے اوپر سے دوکانداروں کے ادھار الگ سے موجود ہیں اُنہوں نے موجودہ ڈپٹی کمشنر سے جبری وصول کی گئی رقم واپس دلوا نے کا مطا لبہ کیا ہے۔

انکشاف

مزید : ملتان صفحہ آخر