فوڈ اتھارٹی ٹیمیں سرگرم‘ ملتان سمیت مختلف شہروں میں 10پوائنٹس سیل

    فوڈ اتھارٹی ٹیمیں سرگرم‘ ملتان سمیت مختلف شہروں میں 10پوائنٹس سیل

  



ملتان (سٹاف رپورٹر)پنجاب فوڈ اتھارٹی کی فوڈ سیفٹی ٹیموں نے ملتان سمیت مختلف شہروں میں کارروائیاں کرتے ہوئے مضر صحت اجزاء کے استعمال،ممنوعہ اشیاء کی فروخت اور صفائی کے ناقص انتظامات پر10فوڈپوائنٹس کو سربمہر کر دیا۔ متعدد فوڈ پوائنٹس کوحفظانِ صحت کے اصولوں کی خلاف ورزیوں پر1لاکھ57ہزار کے جرمانے عائد کیے گئے۔ تفصیلات کے مطابق (بقیہ نمبر36صفحہ12پر)

ملتان کی فوڈ سیفٹی ٹیموں نے جانوروں کی چربی سے آئل نکالنے، بائیوڈیزل کمپنی سے عدم معاہدے،گندے اور بدبودار ماحول کی بناء پر مقبول احمداورعمران فیٹ رینڈرنگ یونٹس کو سیل کردیا۔اسی طرح وہاڑی کی فوڈ سیفٹی ٹیم نے سابقہ ہدایات پر عمل نہ کرنے،ملاوٹی،زائدالمیعاد مصالحہ جات کی فروخت اور صفائی کے ناقص انتظامات پر ممتاز مصالحہ فیکٹری کو سربمہر کیا۔رحیم یارخان کی فوڈ سیفٹی ٹیم نے مٹھائی کی تیاری میں کھلے رنگوں،کیمیکلز، زنگ آلود مشینری کے استعمال پر رحمانی سویٹس اینڈ بیکرز جبکہ ڈی جی خان میں وقار سویٹس کو سیل کیا۔بہاولپور میں چیکنگ کے دوران رینسڈ آئل کے استعمال،اشیاء پر لیبلنگ نہ کرنے،گندے اور بدبودار ماحول کی بناء پر الفاروق فوڈ کیفے،خان بروسٹ اینڈ چکن بریانی اور چوہدری جی چکن بروسٹ کو سیل کیا۔مزید برآں بہاولنگر میں زائدالمیعاد چائے کی دوبارہ پیکنگ کرنے،رنگ کی ملاوٹ پر سپرسپ ٹی ویئر ہاؤس جبکہ رحیم یار خان میں ممنوعہ گٹکا،زائدالمیعاد اشیاء کی فروخت اور لائسنس کی عدم دستیابی پر اشفاق کریانہ سٹور کو سیل کیا۔علاوہ ازیں فوڈ سیفٹی ٹیموں نے بہاولپو ر اور ملتان کے گردونواح میں کارروائیوں کے دوران سابقہ ہدایات پر عمل نہ کرنے،غیر معیاری اشیاء کی فروخت اور صفائی کے ناقص انتظامات پر 97,500 کے جرمانے عائد کیے۔ڈی جی خان،لیہ اور گردونواح میں پنجاب فوڈ اتھارٹی قوانین کی خلاف ورزیوں پر 59,500کے جرمانے عائد کیے گئے۔جنوبی پنجاب کے مختلف علاقوں میں چیکنگ کے دوران بھاری مقدار میں ملاوٹی مصالحہ جات، زائد المیعاد اشیائے خورونوش،کیمیکلز اور مضر صحت خوراک کو تلف کیا گیا۔ مزید برآں فوڈ سیفٹی ٹیموں نے حفظانِ صحت کے اصولوں کی خلاف ورزیوں پر متعدد فوڈپوائنٹس کو وارننگ نوٹس بھی جاری کیے۔

سیل

مزید : ملتان صفحہ آخر