نوجوان کینیڈین وزیر اعظم نے اپنی چھٹیاں ایک ایسی پاکستانی کے ساتھ گزاریں کہ سن کر آپ کا سر بھی فخر سے بلند ہوجائے گا‎

نوجوان کینیڈین وزیر اعظم نے اپنی چھٹیاں ایک ایسی پاکستانی کے ساتھ گزاریں کہ ...
نوجوان کینیڈین وزیر اعظم نے اپنی چھٹیاں ایک ایسی پاکستانی کے ساتھ گزاریں کہ سن کر آپ کا سر بھی فخر سے بلند ہوجائے گا‎

  


اوٹاوا (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستانی سیاستدان چھٹیاں منانے کے لئے یورپ کا رخ کرتے ہیں لیکن کینیڈا جیسے بڑے یورپی ملک کے وزیر اعظم کو چھٹیاں منانے کا خیال آیا تو گھر والوں سمیت ایک پاکستانی شخصیت کے ہاں جا پہنچے۔

آسٹریلوی وزیراعظم کے دفتر سے جاری کئے گئے ایک بیان کے مطابق وزیراعظم جسٹن ٹروڈو چھٹیاں منانے کے لئے بہاماز میں واقع پرنس کریم آغا خان کے جزیرے بیل آئی لینڈ پر گئے۔ ان کے خاندان اور کچھ قریبی دوستوں نے بھی بہاماز میں واقع خوبصورت جزیرے پر چھٹیاں گزاریں۔ ویب سائٹ سی بی سی کی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم کے دفتر سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا کہ ”عزت مآب آغا خان اور کینیڈا کے وزیراعظم کئی سالوں سے قریبی خاندانی دوست ہیں۔“ اس بیان میں یہ بھی واضح کیا گیا کہ وزیراعظم کے سرکاری طیارے پر ان کے خاندان کے کسی فردیا دوست نے سفر نہیں کیا بلکہ ان تمام افراد کے سفری اخراجات وہ اپنی جیب سے ادا کریں گے۔

کینیڈا کے ساتھ پرنس کریم آغا خان کا تعلق بہت مضبوط اور گہرا بتایا جاتا ہے۔ انہیں 2009ءمیں کینیڈا کی اعزازی شہریت بھی دی جاچکی ہے۔ پرنس کریم آغا خان ششم کا شمار دنیا کی امیر ترین شخصیات میں ہوتا ہے اور وہ اسماعیلی برادری کے روحانی پیشوا بھی ہیں۔ وہ آغا خان ڈویلپمنٹ نیٹ ورک کے سربراہ بھی ہیں جو سماجی ترقی ، تعلیم اور خیراتی شعبوں میں قابل قدر خدمات سرانجام دے رہا ہے۔

آغا خان فاﺅنڈیشن کو کینیڈا کی جانب سے فلاحی منصوبوں کے لئے قابل ذکر امداد فراہم کی جاتی ہے۔ تازہ ترین گرانٹ افغانستان میں صحت کی خدمات کو بہتر کرنے کے لئے جاری پانچ سالہ منصوبے کے لئے دئیے گئے ساڑھے پانچ کروڑ ڈالر (تقریباً ساڑھے پانچ ارب پاکستانی روپے) ہے۔ پاکستان میں بھی اس فاﺅنڈیشن کے تحت درجنوں فلاحی ادارے کام کر رہے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...