مسلمان اپنے مسائل کیلئے امریکہ اور یورپ کی طرف دیکھنا چھوڑ دیں: حافظ سعید

مسلمان اپنے مسائل کیلئے امریکہ اور یورپ کی طرف دیکھنا چھوڑ دیں: حافظ سعید

ملتان (سٹی رپورٹر)امیر جماعۃالدعوۃ پاکستان پروفیسر حافظ محمد سعید نے کہا ہے کہ اسلامی فوجی اتحاد کی طرح مسلمان اپنی بین الاقوامی منڈیاں اور عدالتیں بھی قائم کریں۔ اگر یورپی یونین ،یورو اور ڈالر بن سکتا ہے تو اسلامی یونین اور اسلامی کرنسی کیوں نہیں۔اقوام متحدہ مسلمانوں کے مسائل حل کرنے کیلئے کوئی کردار ادا نہیں کر رہی۔ مسلم ممالک اپنے مسائل کے حل کیلئے امریکہ اور یورپی یونین کی طرف دیکھنا چھوڑ دیں۔باہم اتحادویکجہتی کے ذریعہ ہی مسلمان ملک بیرونی سازشوں کا مقابلہ کر سکتے ہیں۔امریکہ کی طرف سے بھارتی خوشنودی کیلئے المحمدیہ سٹوڈنٹس پر پابندی لگائی گئی۔ وہ مرکز ابن باز چوک رشید آباد میں جنوبی پنجاب کے مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے کارکنان و ذمہ داران کی تربیتی نشست سے خطاب کر رہے تھے۔اس موقع پر جماعۃالدعوۃ کے مرکزی رہنما (بقیہ نمبر33صفحہ7پر )

مولاناسیف اللہ خالد، میاں سہیل احمد ودیگر نے بھی خطاب کیا۔ جماعۃالدعوۃ کے سربراہ حافظ محمد سعید نے کہاکہ کشمیر پاکستان کے لیے زندگی اور موت کا مسئلہ ہے۔ہم انسانی اعتبار سے کشمیر کی بات کرتے ہیں۔اگر امریکہ میں بھی انسانوں پر ظلم ہو رہا ہو تو اس کے لیے بھی آواز اٹھائیں گے۔جب سے ہم نے کشمیریوں کے لیے آواز بلند کرنا شروع کی ہے بھارت و امریکہ ہمارے خلاف سرگرم ہو گئے ہیں۔کشمیریوں کی موجودہ تحریک میں ہم نے کشمیریوں کی بھر پور مدد کی ہے۔انہوں نے کہاکہ ہمارا اکنامک سسٹم مسائل کی اصل جڑ ہے۔ہماراسب سے بڑا مسئلہ یہ ہے کہ ہم نے دین کو اپنی معاشرتی زندگی سے الگ کر دیا ہے اور ہمارا س سے تعلق بالکل کٹ کر رہ گیا ہے ۔ہماری جماعت کا سب سے بڑا کام ریلیف کا ہے۔ہم نے بلوچستان میں 1000کنویں بنائے ہیں۔حافظ محمد سعید نے کہاکہ بلوچستان کے مسائل بہت زیادہ ہیں۔بلوچ قبائل اور قوم پرست جماعتوں کے لیڈروں نے ہمارا بہت ساتھ دیاہے، وہ بلوچستان میں ہمارے ساتھ ملکر کام کر رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ بھارت کی کوشش ہے کہ کشمیر میں ہندوؤں کی تعداد زیادہ اور مسلمانوں کی تعداد کم کر کے دکھائی جائے۔ اس مقصد کیلئے غیر کشمیریوں کو ڈومیسائل سرٹیفکیٹس جاری کئے جارہے ہیں۔ یہ کشمیریوں کے خلاف بہت بڑی سازش ہے۔اس ظلم اور ریاستی دہشت گردی کو کسی صورت برداشت نہیں کیا جاسکتا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...