ہم ’ووٹ کو عزت دو‘ کے نظریے پر اب بھی قائم ہیں:رانا تنویر حسین

ہم ’ووٹ کو عزت دو‘ کے نظریے پر اب بھی قائم ہیں:رانا تنویر حسین
ہم ’ووٹ کو عزت دو‘ کے نظریے پر اب بھی قائم ہیں:رانا تنویر حسین

  



اسلام  آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما رانا تنویر حسین نے کہاہے کہ آرمی ایکٹ میں ترمیم پر ووٹ دینے کا مطلب ہرگز یہ نہیں کہ مسلم لیگ ن سویلین بالادستی سے پیچھے ہٹ گئی ہے بلکہ ہم ووٹ کو عزت دو کے نظریے پر اب بھی قائم ہیں۔

نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے چیئرمین پبلک اکاؤنٹس کمیٹی رانا تنویر حسین کا کہنا تھا کہ افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ تحریک انصاف کی حکومت نے آرمی چیف کی توسیع کے معاملے کو بھی  غیر سنجیدگی سے ہینڈل کیا اور اس پر سوالیہ نشان کھڑے ہو گئے،جس طرح اٹارنی جنرل نے سپریم کورٹ میں دلائل دیئے وہ بھی ایک لمبی داستان ہے،ہماری پارٹی نے قانون سازی پر اختلاف نہیں کیا ،مولانا فضل الرحمان بھی پہلے قانون سازی کی حمایت کرتے رہے ہیں ،ہمارے ممبران کے خدشات اصولی تھے ۔اںہوں نے کہا کہ  ہمیں تو 3 دن پہلے قومی سلامتی کا معاملہ یاد آ گیا تھا لیکن پیپلز پارٹی کو تو صبح 4 بجے پتہ چلا کہ معاملہ قومی سلامتی کا ہے۔اُنہوں نے کہا کہنیب آرڈیننس پارلیمان میں لانے سے پہلے حزب اختلاف کو آن بورڈ لینا ہوگا، حکومت نے رابطے شروع کردیے ہیں۔اُنہوں نے کہاکہ آرمی ایکٹ میں ترمیم پرووٹ دینےکامطلب ہرگز یہ نہیں کہ مسلم لیگ ن سویلین بالادستی سے پیچھے ہٹ گئی ہےبلکہ ہم ’’ووٹ کو عزت دو‘‘ کے نظریے پر اب بھی قائم ہیں۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد


loading...