قبائلی اضلاع میں امن و اما ن کیلئے صحافیوں کی قربانیاں لازوال ہیں: شوکت یوسفزئی 

قبائلی اضلاع میں امن و اما ن کیلئے صحافیوں کی قربانیاں لازوال ہیں: شوکت ...

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)خیبر پختونخوا کے وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی نے کہا ہے کہ قبائلی اضلاع میں امن وامان کے قیام کے لیے قبائلی صحافیوں کی قربانیاں لازوال ہیں قبائلی صحافیوں نے دہشت گردی جیسے مشکل حالات میں اپنی صحافتی زمہ داریاں احسن طریقے سے انجام دیں باڑہ تحصیل پریس کلب کو دہشتگردی کی وجہ سے بے تحاشا نقصان پہنچا۔ تحصیل پریس کلب کو سالانہ گرانٹ کے اجراء کے لیے پالیسی بنا رہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے باڑہ تحصیل پریس کلب کے وفد سے ملاقات میں کیا۔ وفد میں باڑہ پریس کلب کے صدر خادم خان آفریدی، جنرل سیکرٹری کامران آفریدی، کابینہ اور پریس کلب کے دیگر ممبران شریک تھے۔وفد نے صوبائی وزیر کو پریس کلب اور کام میں درپیش مسائل سے آگاہ کیا اور قبائلی اضلاع کے مسائل اور ترقیاتی منصوبوں پر تفصیلی گفتگو کی۔ شوکت یوسفزئی نے کہا کہ حکومت قبائلی اضلاع کے صحافیوں کی مشکلات سے آگاہ ہے قبائلی اضلاع دہشت گردی کا شکار رہے لیکن صحافیوں نے مشکل حالات میں اپنی ذمہ داریاں بخوبی نبھائئیں اور قیام امن کے لیے قربانیاں بھی دیں صحافیوں کے تمام مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کیا جائے گا.  انہوں نے کہا کہ تحصیل پریس کلب کو سالانہ گرانٹ کے اجراء کے لیے پالیسی بنا رہے ہیں تاکہ پریس کلب کو معاشی طور پر کوئی مسائل درپیش نہ ہو ں گرانٹ کی مد میں فنڈز کی کوئی کمی نہیں ہے باڑہ پریس کلب کی تعمیر ومرمت کے لیے عملی اقدامات اٹھائے جائیں گے قبائلی اضلاع کے صحافیوں کو اکریڈیش کارڈز کے اجراء کو بھی یقینی بنایا جائے گا۔ صوبائی وزیر نے باڑہ پریس کلب کو بروقت پریس کلب انتخابات یقینی بنانے پر تعریف اور مبارکباد پیش کی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر