امریکی اڈے پر حملہ کامیاب رہا، ایران کا جواب امریکی منہ پر طمانچہ ہے، ایرانی سپریم لیڈر

امریکی اڈے پر حملہ کامیاب رہا، ایران کا جواب امریکی منہ پر طمانچہ ہے، ایرانی ...
امریکی اڈے پر حملہ کامیاب رہا، ایران کا جواب امریکی منہ پر طمانچہ ہے، ایرانی سپریم لیڈر

  



تہران(ڈیلی پاکستان آن لائن)ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای نے عراق میں امریکی فوجی اڈے پر حملے کے بعد قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امریکی اڈے پر حملہ کامیاب رہا۔سپریم لیڈر نے اعلان کیاہے کہ اب امریکا کیخلاف اس سے بھی بڑے حملے کئے جائیں گے۔ایران کا جواب امریکی منہ پر طمانچہ ہے۔

اپنے خطاب میں آیت اللہ علی خامنہ ای نے کہا کہ ایرانی قوم آج دنیا کے غنڈوں کے سامنے ڈٹ گئی ہے۔انہوں نے کہا جنرل قاسم سلیمانی ایران کے بہادر سپوت تھے، ان میں کوئی منافقت نہیں تھی۔قاسم سلیمانی سیاسی میدان میں بھی جرات کامظاہرہ کرتے تھے۔انہوں نے امریکی جارحیت کا جراتمندی سے مقابلہ کیا۔انہوں نے کہاجنرل قاسم سلیمانی کی شہادت پر ایرانی قوم صدمے کا شکار ہے ،لیکن آج کا ایرانی نوجوان ماضی کی نسبت انقلاب پر زیادہ اور کامل یقین رکھتا ہے۔ہم اپنے دفاع میں کسی بھی قسم کی کارروائی سے دریغ نہیں کریں گے۔ انہوں نے کہا قرآن پاک  میں بھی دشمنوں سے خبردار رہنے کا کہاگیاہے، جو جنگ مذہبی جوش و خروش سے لڑی جائے اس میں اللہ کی مدد حاصل ہوتی ہے۔

آیت اللہ خامنہ ای نے کہاامریکا نے اسرائیل کی مدد سے حزب اللہ کو ختم کرنے کی کوشش کی۔ انہوں نے کہا ایران کا جواب امریکی منہ پر طمانچہ ہے۔

واضح رہے امریکا ایران کشیدگی کے باعث خطے پر جنگ کے بادل منڈلا رہے ہیں۔ایرانی کمانڈر قاسم سلیمانی کے قتل کے جواب میں ایران نے عراق میں امریکیوں کے زیر استعمال فوجی اڈوں پر میزائل حملے کردیے ہیں جس کی تصدیق پنٹا گان کی جانب سے بھی کر دی گئی ہے۔

ایرانی میڈیا کا دعویٰ ہے کہ حملہ پاسداران انقلاب کی جانب سے کیا گیا جس میں زمین سے زمین پر مار کرنے والے درجنوں میزائل داغے گئے۔حملے میں اسی امریکیوں کی ہلاکت کا دعویٰ کیاگیاہے۔ جبکہ حملے میں عراق میں موجود امریکی فوجی اڈوں عین الاسد،اربیل اور تاجی کیمپ کو نشانہ بنایا گیا۔ایرانی میڈیا کے مطابق حملوں کا نشانہ بنائے جانے والے مقامات پر امریکی اور دیگر اتحادی ملکوں کے فوجی تعینات ہیں۔

مزید : اہم خبریں /بین الاقوامی /عرب دنیا /Breaking News