پنشن اخراجات ملکی ترقیاتی اخراجات کے نصف کے قریب پہنچ گئے: سٹیٹ بینک

پنشن اخراجات ملکی ترقیاتی اخراجات کے نصف کے قریب پہنچ گئے: سٹیٹ بینک

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 لاہور(این این آئی) اسٹیٹ بینک نے خبردار کیا ہے پنشن اخراجات وفاقی اورصوبائی سطح پر صحت وتعلیم کے اخراجات سے زائد ہے، 2021 میں پنشن کی مد میں اخراجات بڑھیں گے۔تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ بینک آف پاکستان کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پنشن اخراجات ملکی ترقیاتی اخراجات کے نصف کے قریب پہنچ گئے، 2011سے2021تک وفاقی سطح پر پنشن اخراجات میں 18فیصداضافہ ہوا۔اسٹیٹ بینک کا کہنا تھا کہ پنشن اخراجات وفاقی اورصوبائی سطح پرصحت وتعلیم کے اخراجات سے زائد ہے۔مرکزی بینک نے خبردار کیا کہ 2021میں پنشن کی مد میں اخراجات بڑھیں گے، بڑے پیمانے پرجلدریٹائرمنٹ کے رجحان کے باعث پنشنرز کی تعداد بڑھے گی اور جلدریٹائرمنٹ کارجحان، پنشن اخراجات میں اضافے کا باعث بنے گا۔مالی سال 2020ٹیکس ریونیو میں پنشن اخراجات18اعشاریہ7فیصدتک پہنچ چکے ہیں، پنشن اخراجات 10سال پہلے کی سطح سے تقریباً دگنے ہیں۔
پنشن اخراجات


کراچی(اکنامک رپورٹر)ملکی زرمبادلہ کے مجموعی ذخائر ایک ہفتے میں 25کروڑ81لاکھ ڈالرکے اضافے سے20ارب 51کروڑ21لاکھ ڈالر کی سطح پرپہنچ گئے۔اسٹیٹ بینک کی جانب سے جاری اعدادوشمارکے مطابق گزشتہ سال 2020کے 31دسمبر کو ختم ہونے والے آخری ہفتے کے دوران ملکی مجموعی زرمبادلہ کے ذخائر20کھرب25ارب40لاکھ ڈالر سے بڑھ کر 20ارب 51کروڑ21لاکھ ڈالر ہوگئے۔جس میں مرکزی بینک کے ذخائر26کروڑ14لاکھ ڈالرکے اضافے سے13ارب 41کروڑ23لاکھ ڈالر ہوگئے جب کہ دیگر کمرشل بینکوں کے ذخائر کی مالیت 33لاکھ ڈالرکی کمی سے گھٹ کر7ارب 9کروڑ98لاکھ ڈالر ہوگئی۔اسٹیٹ بینک ترجمان کے مطابق اسٹیٹ بینک کے ذخائر میں اضافہ بیرونی سرکاری رقوم کی آمد کے باعث ہوا ہے۔ 
ذخائر

مزید :

صفحہ آخر -