ریلوے کا قبضہ گروپوں کیخلاف کریک ڈاؤن، 114ایکڑ سے زائد زمین واگزار 

ریلوے کا قبضہ گروپوں کیخلاف کریک ڈاؤن، 114ایکڑ سے زائد زمین واگزار 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور (لیڈی رپورٹر)پاکستان ریلویز نے ریلوے زمینوں پر قابض قبضہ مافیا کے خلاف شکنجہ کس دیاہے۔یکم جولائی سے 31 دسمبر 2020تک  ریلوے نے تمام ڈویژنوں میں کاروائیاں کرتے ہوئے کمرشل، رہائشی اور زرعی زمینوں کی مد میں.48 114 ایکٹر زمین واگزار کروائی جس کی مالیت تقریباً ایک ارب 22 کروڑ 58 لاکھ 11ہزار روپے  بنتی ہے۔ واضح رہے کہ وزیر ریلویز محمد اعظم خان سواتی نے اپنا عہدہ سنبھالتے ہی کہا تھاکہ ریلوے کی زمینوں کو قبضہ مافیا سے واگزار کروایا جائے گا۔تفصیلات کے مطابق پشاور ڈویژن میں 29.4 ایکٹر، راولپنڈی ڈویژن 8.02 ایکٹر، مغلپورہ ڈویژن 0.19 ایکٹر، ملتان ڈویژن 46.96 ایکٹر، سکھر ڈویژن 11.75 ایکٹر، کراچی ڈویژن 9.83 ایکٹر اور کوئٹہ ڈویژن نے 0.83 ایکٹر زمینیں قبضہ مافیا سے واگزار کروائیں۔جنوری 2021 کے پہلے ہفتہ میں کراچی، لاہور اور ملتان ڈویژن میں تقریباً 45ایکٹر زمین واگزار کروائی گئی جسکی مالیت تقریباًسوا دو ارب سے زائد بنتی ہے۔جبکہ   ریلوے لاہور ڈویژن نے سیالکوٹ میں قبضہ مافیا کے خلاف 9 پٹرولیم گودام سیل کرکے 75 کروڑ مالیت کی جگہ واگزار کروالی۔چیئرمین ریلویز حبیب الرحمان گیلانی، چیف ایگزیکٹوآفیسر پاکستان ریلویز نثار احمدمیمن اور آئی جی ریلوے پولیس عارف نواز خان کی افسران ہ اہلکاروں کو قبضہ مافیا کے خلاف کارروائیاں تیز ترکرنے کی ہدایات بھی کر دی ہے۔