امریکی کانگریس پر حملہ کرنے والے اس شخص کی تصاویر پوری دنیا میں وائرل، لیکن یہ دراصل کون ہے؟ حیران کن تفصیلات سامنے آگئیں

امریکی کانگریس پر حملہ کرنے والے اس شخص کی تصاویر پوری دنیا میں وائرل، لیکن ...
امریکی کانگریس پر حملہ کرنے والے اس شخص کی تصاویر پوری دنیا میں وائرل، لیکن یہ دراصل کون ہے؟ حیران کن تفصیلات سامنے آگئیں
سورس: Twitter/ShawnInArizona

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ روز امریکی کیپیٹل ہل (ایوان نمائندگان)پر حملہ کرنے والوں کے متعلق ری پبلکنز کہہ رہے تھے کہ یہ کام صدر ٹرمپ کے حامیوں کا نہیں بلکہ اس پرتشدد احتجاج کے پیچھے بدنام زمانہ تنظیم ’انٹیفا‘ (Antifa)کا ہاتھ ہے۔ ری پبلکنز کی طرف سے اپنے اس دعوے کے ثبوت کے طور پر ایک آدمی کی تصویر بھی سوشل میڈیا پر پوسٹ کی جا رہی تھی۔ اس تصویر میں آدمی نے پشم والا کوٹ اور سر پر سینگوں والا ہیلمٹ پہن رکھا ہوتا ہے۔ ری پبلکنز بتا رہے ہوتے ہیں کہ یہ آدمی انٹیفا کا کارکن ہے مگر ان کا یہ دعویٰ یکسر غلط ہے۔


دی انڈیپنڈنٹ کے مطابق یہ آدمی 32سالہ جیک اینجلی ہے جو صدر ٹرمپ کا کٹڑحامی اورQAnonنامی سازشی نظرئیے کا پیروکار ہے۔ وہ اس سے پہلے بھی توجہ کا مرکز بن چکا ہے اور ایریزونا ری پبلک کے مطابق اسے گاہے ’QAnon Shaman‘ کے نام سے بھی پکارا جاتا ہے۔گزشتہ سال کے دوران جیک اینجلی نامی اس آدمی کو کئی مظاہروں میں دیکھا گیا ہے۔ اکثر وہ اسی کاسٹیوم میں مظاہروں میں شریک ہوتا ہے اور ہمیشہ صدر ٹرمپ کی حمایت کرتا نظر آتا ہے۔ فروری میں ایک مظاہرے کے دوران اس کی تصویر منظرعام پر آئی تھی جس میں اس نے ایک سائن بورڈ اٹھا رکھا ہوتا ہے جس پر ’Q Sent Me‘ لکھا ہوتا ہے۔