ترسیلات زر کا اندازہ 20ارب ڈالر سے زائد ہے:پائڈ سٹڈی رپورٹ

ترسیلات زر کا اندازہ 20ارب ڈالر سے زائد ہے:پائڈ سٹڈی رپورٹ

  

اسلام آباد (اے پی پی) پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف ڈویلپمنٹ اکنامکس (پائڈ) کی سٹڈی رپورٹ کے مطابق بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کی طرف سے بھیجی جانے والی ترسیلات زر کا اندازہ 20ارب ڈالر سے زائد ہے۔ ڈاکٹر راشد امجد ، ڈاکٹر جی ایم عارف اور ڈاکٹر محمد عر فان کی سٹڈی رپورٹ کے مطابق 2001ءتا 2012ءکے دوران ترسیلات زر میں دس گنا اضافہ ہوا ہے اور اس میں مزید اضافہ ممکن ہے اگر بیرون ممالک سے رقوم بھیجنے کے نظام کو مربوط کیا جائے ۔ رپورٹ کے مطابق سال 2004ءمیں بیرون ممالک کام کرنے والی پاکسانی افرادی قوت 4ملین افراد پر مشتمل تھی جو 2012ءمیں بڑھ کر 7ملین تک پہنچ چکی ہے ۔ ترسیلات زر میں اضافہ کی ایک اور وجہ ہنر مند افرادی قوت میں اضافہ ہے کیونکہ ہنر مند افراد دوسرے ممالک میں جاکر اچھی تنخواہیں وصول کر رہے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق بیرونی ممالک میں کام کرنے والی افرادی قوت کی اکثریت نے وہاں کی شہریت اختیار کر لی ہے وہ بھی پاکستان باقاعدگی سے رقوم بھیجتے ہیں۔ سٹڈی رپورٹ میں تجویز پیش کی گئی ہے کہ بیرونی ممالک سے رقوم بھیجنے کے طریقہ کار میں بہتری سے ترسیلات زر میں 10ارب ڈالرز سالانہ کا اضافہ کیا جا سکتا ہے ۔ جس کے سٹیٹ بینک آف پاکستان اور وزارت خزانہ کو چاہئے کہ وہ کمرشل بینکوں کو رقوم کی ترسیل میںزیادہ سے زیادہ شامل کریں اور غیر روایتی طریقوں کی بجائے روایتی طریقوں سے رقوم کی ترسیل کا نظام وضع کریں جس سے ترسیلات زر میں نمایاں اضافہ کیا جاسکتا ہے ۔

مزید :

کامرس -