کشمیریوں کی شمولیت کے بغیر پاک بھارت مذاکرات کامیاب نہیں ہوسکتے،لبریشن فرنٹ

کشمیریوں کی شمولیت کے بغیر پاک بھارت مذاکرات کامیاب نہیں ہوسکتے،لبریشن فرنٹ

  

سرینگر(جی این آئی) لبریشن فرنٹ(آر)نے حالیہ ہندوپاک خارجہ سیکرٹریوں کی بات چیت پر اپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مذاکرات کے دوران مسئلہ کشمیر پر بھی بات تو ہوئی ہے لیکن اس معاملے پر کوئی خاص پیش رفت نہیں ہوئی ہے نہ ان ممالک کے بیچ میں ہونے والے دو طرفہ مذاکرات میں مسئلہ کشمیر کا پائیدار حل نکلنے کی توقع رکھی جاسکتی ہے کیونکہ اس بات چیت میں بنیادی فریق کا موجود نہ ہونا ہی ناکامی کی اصل وجہ ہے انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کی شمولیت کے بغیر پاک بھارت مذاکرات کامیاب نہیں ہوسکتے موصولہ بیان میں کہا گیا ہے کہ پچھلے 64سالوں کے دوران جب بھی دوطرفہ مذاکرات ہوئے ہیں ان میں کبھی بھی مسئلہ کشمیر پر کوئی ٹھوس حل سامنے نہیں لایا گیا۔ بھارت ایک طرف مذاکرات کا ڈھونگ تو کررہا ہے مگراس کے ساتھ ساتھ جموں کشمیر کے طول و عرض میںبے گناہ کشمیر یوں کا قتل عام بھی جاری ہے۔ بھارت دنیا کی بڑی جمہوریت ہونے کا دعوی کرتا ہے مگر انسانی حقوق کے حوالے سے بھارت کا ریکارڈ کافی ابتر ہے پولیس اور فورسز کی طرف سے انسانی حقوق کی دھجیاں اڑائی جارہی ہیں ۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ حال ہی میں زچلڈارہ کپوارہ میں بلا کسی وجہ کے ایک معصوم بے گناہ نوجوان کو گولیوں کا نشانہ بنایا گیا۔ پچھلے 22 سالوں کے دوران ہزروں کی تعداد میں معصوم بے گناہ نوجوانوں کوگرفتار کیا گیا نیز ہزاروں کی تعداد میں کشمیری نوجوانوں کو گولیوں کا نشانہ بناکر ابدی نیند سلایا گیا۔سیاسی عناد کی بنا پر سیاسی قائیدین کو اپنے ہی گھروں سے بے دخل کرنا جمہوریت کا دعوی کرنے والے ملک کو زیب نہیں دیتا ہے۔

مزید :

عالمی منظر -