ریلو ے کیر ج شاپ کے ٹیو ب ویل خراب،مکین بو ند بو ند کو ترس گئے ڈی ایس آفس کے باہر احتجا جی مظا ہر ہ

ریلو ے کیر ج شاپ کے ٹیو ب ویل خراب،مکین بو ند بو ند کو ترس گئے ڈی ایس آفس کے ...

  

لاہور (سٹاف رپورٹر) ریلوے کیرج شاپ مغلپورہ میں لگائے گئے ٹیوب ویل خراب ہوگئے جس کے باعث ورکشاپوں کے ملازمین اور ریلوے کوارٹروں کے مکین پانی کی بوند بوند کو ترس گئے اور سڑکوں پر ریلوے انتظامیہ کے خلاف نکلنے پر مجبور ہوگئے ۔ گزشتہ روز بھی ریلوے ملازمین نے اپنے بچوں کے ہمراہ مغلپورہ ورکشاپس ڈویژن کے ڈویژنل سپرنٹنڈنٹ آفس کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرے میں متاثرین کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اور بینرز اٹھارکھے تھے جن پر ریلوے انتظامیہ کے خلاف اور ٹیوب ویل ٹھیک کروانے کے مطالبات درج تھے۔ احتجاج کے شرکاءنے ٹائر جلا کر روڈ بلاک کردیا جس کی وجہ سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہوگیا۔ تفصیلات کے مطابق مغلپورہ ورکشاپس ڈویژن انتظامیہ نے ریلوے پاور ہاﺅس میں ٹیوب ویل لگایا گیا جس کے ذریعے ریلوے پاور ہاﺅس باجہ لائن کالونی کے مکینوں کو پانی فراہم کیاجارہا تھا۔ ذرائع نے بتایا کہ ایک محتاط اندازہ کے مطابق اس ٹیوب ویل کی مدد سے تقریباً 3 ہزار کوارٹروں کے مکینوں کو پانی کی سپلائی دی جارہی تھی۔ تاہم اس دوران ریلوے کیرج شاپ مغلپورہ میں لگے ہوئے دو ٹیوب ویل خراب ہوگئے جس کیو جہ سے ریلوے پاور ہاﺅس میں لگے ٹیوب ویل سے ریلوے کیرج شاپ کو پانی سپلائی کرنا شروع کردیا گیا اور ریلوے کوارٹروں کو اس کنکشن (ریلوے پاور ہاﺅس ٹیوب ویل) سے پانی کی سپلائی کم کردی۔جس کے باعث ریلوے پاور ہاﺅس باجہ لائن کالونی میںپانی کی قلت پیدا ہوئی۔ ذرائع نے بتایا کہ مذکورہ کالونی کے ریلوے کوارٹروں میں گزشتہ 8 ماہ سے پانی نہیں آرہا اگر آ بھی رہا ہو تو اس کا پریشر بہت سست ہوتا ہے۔ اس کے علاوہ بعض اوقات زنگ آلود اور بدبودار پانی نلکوں میں آتا ہے جس کے باعث ریلوے ملازمین کے بچے گیسٹرو اور ہیپاٹائٹس ”سی“ جیسے خطرناک موذی مرض میں مبتلا ہورہے ہیں اور یہاں مکینوں کا کوئی پرسان حال نہیں۔ پانی میسر نہ ہونے کی وجہ سے خواتین گھروں میںکھانا پکانے سے محروم ہیں اور مکینوں کا نظام زندگی بری طرح مفلوج ہوکررہ گیا ہے۔ لیکن اس کے باوجود ریلوے انتظامیہ خاموش تماشائی بنی بیٹھی ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -