امام جعفر صادقؑ نے جہالت کے اندھیروں میں علم کی شمع روشن کی،قمرزیدی

امام جعفر صادقؑ نے جہالت کے اندھیروں میں علم کی شمع روشن کی،قمرزیدی

راولپنڈی(جنرل رپورٹر) قائد ملتِ جعفریہ آغاسیدحامدعلی شاہ موسوی کے اعلان کے مطابق حضرت امام جعفر صادق علیہ السلام کی شہادت کے سلسلے میں عشرہِ صادقِ آل محمد ؑ کے پروگراموں کاسلسلہ آج بھی جاری رہا۔ امامبارگاہوں اور عزاخانوں میں مختلف مذہبی و ماتمی تنظیموں اوردینی اداروں کے زیراہتمام مجالسِ عزاء اورماتمداری کا انعقاد کیا گیا۔خانوادہ سیدزمردحسین نقوی کے زیر اہتمام امام بارگاہ باب العلم میں مجلس عزا سے خطاب کرتے ہوئے علامہ سیدقمرحیدرزیدی نے کہا کہ حضرت امام جعفر صادق علیہ السلام نے سخت ترین دورِ آمریت میں باطل پرستی کے خلاف سخت جہاد کیا اور حقیقی اسلام کو جو اُس زمانے میں جاں بہ لب تھا اُس کی صورت کو مسخ کرنے کی ہر سازش کو ناکام کردیا۔انہوں نے کہا کہ حضرت امام جعفر صادق علیہ السلام کی وجہ سے دین کی حقیقی تعلیم کا سلسلہ جاری تھا ،دُورُ دور سے لوگ مدینہ آتے تھے اور مشکل مسائل حل کراتے تھے۔امام ابوحنیفہ اور دیگرلاتعدادافراد امام صادق سے علوم باطنی کی تعلیم پاکر پوری دنیا میں مشہور ہوئے ، یہ امر جابرسلطانوں کو نہایت شاق تھا اور وہ چاہتے تھے کسی طرح تعلیماتِ معصوم ؑ کا جلد ازجلد خاتمہ کردیا جائے۔انہوں نے کہا کہ حضرت امام جعفر صادق علیہ السلام اموی سلاطین کے دور میں اسلام کی تباہ حالت دیکھ کر اکثر اس تباہی و بربادی پر چشم پُرآب ہوتے تھے اور خدا سے دعا فرماتے تھے کہ مسلمانوں کو صراطِ مستقیم پر چلنے کی توفیق دے۔مجلس سے سیدرضاکاظمی ، کامران زیدی ، نقی حسن اورحسن جعفرزیدی ، حسن جمیل نے بھی خطاب کیا۔انجمن کنیزان امام العصر والزمان کے زیراہتمام شعب ابی طالب میں عشرہ صادق آل محمد کی مجلس سے خطاب کرتے ہوئے خطیبہ سیدہ آپاحسین نے کہا کہ حضرت امام جعفر صادق علیہ السلام نے اصلاحِ امت اور مفادِ عامہ کیلئے مخلوقِ خدا کو اطاعتِ خداوندی کا سلیقہ سکھایا۔انہوں نے کہا کہ حضرت امام جعفر صادق علیہ السلام نے پرچم صداقت کو بلند کرنے کیلئے اپنی تمام تر توانائیاں صرف کیں اور اپنے آباؤ اجداد کی طرح اس پاکیزہ مشن میں تادم شہادت مصروفِ عمل رہے۔انہوں نے کہا کہ صادقِ آل محمد ؑ نے فرمایا کہ جب اللہ کی محبت کسی بندے کے باطن کو منور کردیتی ہے تو اُسے ہر مصروفیت اور غیر اللہ کے ذکر سے فارغ کردیتی ہے چنانچہ ارشادِ قدرت ہوتا ہے کہ اور جو مومن ہیں اللہ سے شدید محبت رکھتے ہیں،ایک اور مقام پر ارشاد ہوا کہ جب اللہ کا ذکر کیا جاتا ہے تو اُن کے دل ڈر جاتے ہیں اور جب اُن پر اُس کی آیات کی تلاوت کی جاتی ہے تو اُن کے ایمان میں اضافہ ہوجاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ خانوادہِ رسالت ؐ کے عظیم چشم و چراغ حضرت امام جعفر صادق علیہ السلام نے بندگانِ الہی کے دلوں میں محبتِ خداوندی کے چراغ جلا کر انہیں نورِ حق سے آشنا کیا ۔ہیئت طلبائے اسلامیہ کے زیراہتمام علی ہال میں مجلس عزا سے خطاب کرتے ہوئے مفتی باسم عباس زاھری نے کہاکہ اس وقت دنیا کو درپیش مسائل و مشکلات اور مصائب و آلام کا بنیادی سبب نمائندگانِ الہی کی تعلیمات سے دوری ہے۔انہوں نے کہا کہ اس وقت دہشت گردی کے ناسور نے پوری انسانیت کا ناک میں دم کررکھا ہے جس سے چھٹکارا حاصل کرنے کیلئے اُسوہِ صادقِ آل محمد ؑ کی عملی پیروی وقت کی اہم ترین ضرورت ہے۔انہوں نے واضح کیا کہ امام صادق ؑ نے علم کی شمع فروزاں کرکے جہالت و گمراہی کو نیست و نابود کردیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر