معروف صحافی طارق اسماعیل کی 27 ویں برسی آج منائی جائے گی

  معروف صحافی طارق اسماعیل کی 27 ویں برسی آج منائی جائے گی

  

لاہور (خصوصی رپورٹ) معروف صحافی، دانشور اور تجزیہ نگار طارق اسماعیل المعروف پاء جی کی 27ویں برسی آج منائے جائے گی، طارق اسماعیل پاکستانی صحافت کا ایک روشن باب تھے۔ انہوں نے جنرل ضیاء الحق کے دور میں صحافت میں لگنے والی پابندیوں کے خلاف پی یو جے کے پلیٹ فارم سے ساتھیوں کے ہمراہ بھرپور جدوجہد کی تھی طارق اسماعیل نے اپنے صحافتی کیرئیر کا آغاز 1962ء میں روزنامہ ”کوہستان“ سے کیا۔ بعدازاں روزنامہ ”جسارت”اور ”جمہور“ سے بطور سٹاف رپورٹر وابستہ رہے روزنامہ ”پاکستان“ کے چیف رپورٹر اور بعدازاں ایڈیٹر بھی رہے وہ نوائے وقت میں بھی سینئر سٹاف رپورٹر خدمات سرانجام دیتے رہے طارق اسماعیل کا حلقہئ احباب بہت وسیع تھا۔

مجیب الرحمن شامی،عارف نظامی، ڈاکٹر مجاہد منصوری، سکندر حمید لودھی،ضیاء شاہد،مقصود بٹ، ارشاد احمد عارف، عباس اطہر، سلمان غنی، حسین نقی، رؤف طاہر، خالد قیوم، مرحوم رحمت علی رازی، محسن گورائیہ، وکیل انجم اور زاہد عابد سمیت بہت سے سینئر صحافی ان کے قریبی رفقاء میں شامل تھے۔ سیاست دانوں میں فخر امام،میاں محمد نوازشریف، میاں شہبازشریف، محمد خان جونیجو، صدیق الفاروق، چودھری شجاعت حسین، چودھری پرویز الٰہی، منظور وٹو، جام صادق، غلام حیدر وائیں، چودھری الطاف اور میاں محمد اظہر سمیت دیگر سے ان کے قریبی تعلقات تھے، ان کی دو تصانیف الیکشن 1985ء اورالیکشن 1988ء آج بھی ریفرنس کا درجہ رکھتی ہیں وہ 8جولائی 1993ء کو اچانک دل کا دورہ پڑنے سے انتقال کر گئے ان کی وفات سے صحافت میں جو خلاء پیدا ہوا وہ پُر نہ ہو سکا صحافت میں قائم کردہ روایات کے وہ واحد نہ سہی منفرد امین ضرور تھے اللہ تعالیٰ انہیں جوارِ رحمت میں جگہ دے۔نئی نسل آج بھی ان کے پیشہ ورانہ کام اور شخصی خوبیوں کی مہک ضرور محسوس کرتی ہو گی۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -