آٹے کی قیمت میں ناجائز اضافہ برداشت نہیں کیا جائیگا: عثمان بزدار

آٹے کی قیمت میں ناجائز اضافہ برداشت نہیں کیا جائیگا: عثمان بزدار

  

لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے کہاہے کہ صوبے میں آٹے سمیت اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں استحکام کیلئے تمام انتظامی اقدامات اٹھائیں گے-آٹے کی مقرر کردہ نرخوں پر فراہمی کو ہر صورت یقینی بنایا جائے گا- آٹا تھیلا کی قیمت میں خود ساختہ اضافہ کرنے والوں کے خلاف بلاتفریق قانونی کارروائی ہوگی-وزیراعلیٰ نے کہاکہ ناجائز منافع خوروں اور ذخیرہ اندوزوں کے خلاف بلا امتیاز کارروائی ہوگی-کابینہ کمیٹی برائے پرائس کنٹرول کو آٹے اور دیگر اشیائے ضروریہ کی مقرر کردہ قیمتوں میں فراہمی کے لئے ضروری اقدامات کرنے کے حوالے سے ہدایات جاری کردی ہیں -آٹے اور دیگراشیائے ضروریہ کے نرخوں میں ناجائز اضافہ کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا۔سردار عثمان بزدارکی زیر صدارت سول سیکرٹریٹ میں کابینہ کمیٹی برائے ڈیزاسٹرمینجمنٹ کااہم اجلاس منعقدہوا،جس میں مون سون سیزن کے پیش نظر ممکنہ سیلاب کے حوالے سے محکموں اور اداروں کی تیاریوں و انتظامات کاجائزہ لیاگیااوراربن فلڈنگ کے خدشے کے حوالے سے شہرو ں میں ضروری انتظامات پر غور کیاگیا-وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے متعلقہ محکموں او راداروں کو ہمہ وقت چوکس رہنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ مون سون سیزن کے پیش نظر دریاؤں میں پانی کے بہاؤ کو 24گھنٹے مانیٹر کیاجائے-پی ڈی ایم اے میں قائم کنٹرول روم صورتحال پرنظر رکھے اورمتعلقہ وفاقی و صوبائی محکمو ں کے درمیان بہترین کوآرڈینیشن یقینی بنائی جائے- وزیراعلیٰ نے ضلع کی سطح پر ایمرجنسی پلان تیار کرنے کی ہدایت کی او رکہاکہ ڈسٹرکٹ انسپکشن کمیٹیاں باقاعدہ اجلاس کر کے انتظامات کا جائزہ لیں -وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے نالوں کی صفائی کے کام میں تاخیر پر برہمی کااظہار کرتے ہوئے کہاکہ جون تک نالوں کی صفائی مکمل ہونی چاہیے تھی- اس ضمن میں تاخیر کے ذمہ داروں کے خلاف کارروائی ہوگی- انہوں نے ہدایت کی کہ ہنگامی بنیادوں پر نالوں کی صفائی کے کام کو مکمل کر کے رپورٹ پیش کی جائے- انہوں نے کہاکہ اربن فلڈنگ سے نمٹنے کے لئے تمام انتظامات جلد مکمل کئے جائیں -دریاؤں کے حفاظتی بند اور پشتوں کی مضبوطی کے کام کا تھرڈ پارٹی آڈٹ ہوگا-شہروں میں نکاسی آب کے لئے موثر حکمت عملی کے تحت جامع پلان مرتب کیا جائے- سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت سول سیکرٹریٹ میں خصوصی اجلاس منعقد ہوا، جس میں صوبے میں امن وامان کی صورتحال اور عوام کے جان ومال کے تحفظ کے لئے کئے گئے اقدامات کاجائزہ لیا گیا-ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ نے امن عامہ سے متعلق اقدامات کے بارے میں بریفنگ دی-اجلاس میں فیصلہ کیاگیاکہ فرقہ واریت میں ملوث عناصر کی سرگرمیوں کو سختی سے کچلا جائے گا اورپنجاب کے داخلی و خارجی راستوں کی کڑی نگرانی کی جائے گی -اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیاکہ کالعدم تنظیموں اوران کے سہولت کاروں کی جانب سے چندہ یا فنڈز جمع کرنے کی پابندی پر سختی سے عملدرآمد کرایا جائے گا-وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ عوام کے جان ومال کے تحفظ کے لئے ہر ممکن اقدامات اٹھائے جائیں اورقانون شکن عناصر کے خلاف قانون کے تحت کارروائی کی جائے-جرائم پیشہ عناصر کے خلاف زیروٹالرنس کی پالیسی کے تحت کارروائی کی جائے-وزیراعلیٰ نے کہاکہ وفاقی اور صوبائی متعلقہ اداروں میں کوآرڈینیشن کو مزید موثر بنایاجائے گا-سوشل میڈیا پر نفرت انگیز مواد پھیلانے والے عناصر کی سرکوبی کے لئے ہر ضروری اقدام اٹھایا جائے گا-وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ پنجاب میں فرقہ واریت میں ملوث عناصر کے خلاف بلاتفریق کارروائی کی جائے-انہوں نے کہاکہ پنجاب میں این جی اوز کاآڈٹ مکمل ہوچکاہے اور اس حوالے سے پنجاب چیریٹی کمیشن تشکیل دے دیا گیا ہے جبکہ آن لائن رجسٹریشن کے لئے پورٹل ڈویلپ کیا گیاہے-وزیراعلی نے کہاکہ محکمہ داخلہ میں سٹرٹیجک بورڈ فعال بنایا جائے گا-وزیراعلیٰ نے امن عامہ کے لئے موثر اقدامات پر محکمہ پولیس، محکمہ داخلہ،سی ٹی ڈی اور متعلقہ اداروں کی کارکردگی کی تعریف کی-وزیراعلیٰ کو بریفنگ کے دوران بتایا گیاکہ پنجاب میں فروری 2017سے اب تک فرقہ واریت کا کوئی واقعہ پیش نہیں آیا-صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت، چیف سیکرٹری، انسپکٹرجنرل پولیس، ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ اوراعلیٰ حکام نے اجلاس میں شرکت کی- سردار عثمان بزدارسے وزیراعلیٰ آفس میں صوبائی وزیر انسانی حقوق و اقلیتی امور اعجاز عالم نے ملاقات کی-صوبائی وزیر اعجاز عالم نے محکمہ انسانی حقوق و اقلیتی امور کی جانب سے مرتب کردہ کتاب ”وائٹ ان فلیگ“ وزیر اعلیٰ عثمان بزدار کو پیش کی -وزیر اعلیٰ عثمان بزدار نے اقلیتوں کے حوالے سے جامع کتاب ترتیب دینے پر محکمہ انسانی حقوق و اقلیتی امور کی کاوشوں کو سراہتے ہوئے کہاکہ پاکستان میں بسنے والی اقلیتی برادری کو برابر کے حقوق حاصل ہیں -پنجاب حکومت نے اقلیتوں کی فلاح و بہبودکے لئے مینارٹی ایمپاورمنٹ پیکیج دیا ہے - انہوں نے کہاکہ پنجاب حکومت نے اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ کے لئے مؤثر اقدامات اٹھائے ہیں - اقلیتی برادری کو ترقی کے سفر میں برابر کا حصہ دیں گے۔ اقلیتی برادری کی عبادت گاہوں کی تزئین و آرائش کے لئے فنڈز فراہم کئے گئے ہیں - انہوں نے کہاکہ اقلیتی بھائیوں کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کریں گے۔ اقلیتی برادری کی فلاح و بہبود کے لئے بجٹ میں اضافہ کیا گیا ہے - مسیحی برادری نے پاکستان کی تعمیر و ترقی میں بھرپور کردار ادا کیا ہے - فادر سہیل پیٹرک بھی اس موقع پر موجود تھے-

عثمان بزدار

مزید :

صفحہ اول -