سندھ حکومت نے مخالفین کورڈرانے کیلئے جے آئی تی پبلک کی: آفاق احمد

    سندھ حکومت نے مخالفین کورڈرانے کیلئے جے آئی تی پبلک کی: آفاق احمد

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)مہاجر قومی موومنٹ کے چیئرمین آفاق احمد نے کہا ہے کہ سندھ حکومت نے مخالفین کو ڈرانے کے لیے جے آئی ٹی پبلک کی ہے۔ میں نے ہمیشہ صاف ستھری سیاست کی ہے ذوالفقار مرزا سے ملاقات انکے وزیرداخلہ ہونے کی بنا پر ہوئی۔آفاق احمد کو جے آئی ٹی سے نہیں ڈرایا جاسکتا ہے۔جے آئی ٹی کے تحت سزائیں ہونے لگیں تو عدالتیں ختم کردیں۔ان خیالات کا اظہارانہوں نے منگل کو ڈیفنس میں اپنی رہائش گاہ پرپریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ پبلک کی گئی جے آئی ٹی رپورٹ میں مجھ پر بے بنیاد الزامات لگائے گئے ہیں۔ جے آئی ٹی میں ہے میں نے ذوالفقار مرزا سے جیل میں ملاقات کی، جیل میں طبیعت ٹھیک نہیں تھی ذوالفقار مرزا سے ملاقاتیں کیں، ذوالفقار مرزا سے کسی قسم کی رقم نہیں لی، جھوٹا الزام لگایا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ نثار مورائی جس نے الزام لگایا وہ خود کرپٹ انسان ہے، جے آئی ٹی کے تحت سزائیں ہونے لگیں تو عدالتیں ختم کردیں۔آفاق احمد نے کہا کہ ہم پیپلزپارٹی سے ناانصافیوں کی وجہ سے خوش نہیں، نثار مورائی کو عدالت میں کیوں نہیں لایا گیا۔آفاق احمد نے کہا کہ ہمیں جے آئی ٹی سے نہیں ڈرایا جاسکتا اس جے آئی ٹی سے مجھے تو کوئی فرق نہیں پڑے گا تام میرے اہلخانہ اور کارکن کیا سمجھیں گے کہ آفاق احمد نے پچیس لاکھ لیے۔ پی ٹی آئی کی سیاست جے ائی ٹی اور شور شرابے کے علاوہ کچھ نہیں۔انہوں نے کہا کہ اس جے آئی ٹی کی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے۔ آج تک بننے والی جے آئی ٹیز سے کتنے لوگوں کو سزا ہوئی ہم اس جے آئی ٹی سے بلیک میل نہیں ہونگے اور نہ ہی اپنے اصولوں سے پیچھے ہٹیں گے۔ہم سپریم کورٹ آف پاکستان سے مطالبہ کرتے ہیں کہ اس معاملے پر از خود نوٹس لیا جائے۔آفاق احمد نے کہا کہ سیاستدانوں کو بدنام کرنے کی سازش کی گئی ہے۔کراچی اور سندھ کے لوگوں کے ساتھ زیادتی کی جارہی ہے۔کورونا کو بہانہ بنا کر شہر کے ساتھ ہونے والی زیادتی سے منہ نہیں موڑا جاسکتاہے۔انہوں نے کہا کہ جس سے مہاجر قوم کے مفادات کا تحفظ نہ ہو اس اٹھارھویں ترامیم کو ہم نے کیا کرنا ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -