یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن‘ملتان ڈویثرن میں چینی سپلائی بند

  یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن‘ملتان ڈویثرن میں چینی سپلائی بند

  

ملتان (نیوز رپورٹر) یوٹیلٹی سٹور کارپوریشن نے ملتان ڈویڑن میں چینی کی فراہمی دانستہ روک دی ہے جبکہ جنوبی پنجاب کے دیگر دو ڈویڑنز میں چینی کی سپلائی بدستور جاری ہے(بقیہ نمبر37صفحہ7پر)

ملتان کے یوٹیلٹی سٹورز پر عید الفطر کے بعد سے چینی اور آٹا غائب کردیا گیا ہے پچھلے ڈیڑھ ماہ سے یوٹیلٹی سٹورز پر چینی آٹا کے غائب ہونے کے باعث صارفین کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے یوٹیلٹی سٹورز حکام کی جانب سے برتی جانیوالی عدم توجہی اور غیر ذمہ دارانہ طرز عمل نے شہریوں کو حکومتی سطح پر ملنے والی ریلیف سے محروم کرتے ہوئے گرانفروش مافیا سے چینی کی خریداری پر مجبور کر دیا ہے دوسری طرف بہاولپور اور ڈیرہ غازیخان ڈویڑنز کے تمام اضلاع میں یوٹیلٹی سٹورز پر وافر مقدار میں چینی بدستور دستیاب ہے لیکن ملتان ڈویڑن کے تمام اضلاع کے یوٹیلٹی سٹورز پر چینی ناپید بنادی گئی ہے بعض معتبر ذرائع کے مطابق حکومت کی جانب سے یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کو فعال بنانے اور ملازمین کی بقاء کے لیئے دیئے جانیوالے اربوں روپے کی ادائیگی کے بعد یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کے لیئے پرچیزنگ پر مامور حکام ایک بار پھر حکومت کو ماموں بنانے میں مصروف ہوگئے ہیں یہ بھی اطلاعات ہیں کہ چند ماہ قبل دال چنا اور سفید چنا کی خریداری میں لاکھوں روپے کے گھپلے کیئے جاچکے ہیں جبکہ اس وقت اوپن مارکیٹ میں دال چنا اور سفید چنا کی قیمتیں یوٹیلٹی سٹورز کے مقابلے میں 20 سے 30 روپے فی کلو سستی تھیں اس نوعیت کی خرد برد کو کنٹرول نہ کیا گیا اور ادارے میں موجود ایسے عناصر کو آہنی ہاتھوں سے نہ روکا گیا تو شہری حکومتی ریلیف سے محروم رہیں گے اور یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کا ڈھانچہ ایک بار پھر زمیں بوس ہونے اور اپنے انجام کو پہنچنے سے کوئی روک نہیں پائے گا واضح رہے پچھلے دس سالہ ادوار میں اسی خردبرد کے باعث یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن مختلف ایٹمز فراہم کرنیوالی کمپنیوں کا 26 ارب روپے کا مقروض ہوکر دیوالیہ ہوچکا تھا۔

سپلائی بند

مزید :

ملتان صفحہ آخر -