ایم ڈی اے: دو قیمتی پلاٹوں کے حوالے سے کمشنر نمائندے کا اختلافی نوٹ

  ایم ڈی اے: دو قیمتی پلاٹوں کے حوالے سے کمشنر نمائندے کا اختلافی نوٹ

  

ملتان(سپیشل رپورٹر) ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل ملتان ڈویلپمنٹ اتھارٹی چوہدری انور نے 82 ویں گورننگ باڈی کے ایجنڈے کے اہم نقاط سے اختلاف کرنے پر کشمنر آفس ملتان کے نمائندے و چیف آفیسر میونسپل کارپوریشن ملتان اقبال فرید کو لیٹر لکھ دیا ہے اے ڈی جی (بقیہ نمبر28صفحہ6پر)

ایم ڈی اے واسا ڈسپوزل اسٹیشن کی اراضی کی فروخت، آ فیسرز کالونی کے دو پلاٹوں سات ای اور دو ای کے بارے میں اختلافی رائے واپس لینے کا مطالبہ کیا ہے ایم ڈی اے کی 82 ویں گورننگ کا اجلاس 17جون کو ایم ڈی اے آفس میں منعقد ہوا جس میں کمشنر ملتان ڈویڑن شان الحق نے بطور ممبر شرکت کرنی تھی اہم نوعیت کی سرکاری مصروفیات کی وجہ سے وہ خود تو اس مٹیننگ میں شرکت نہ کر سکے انھوں نے چیف آفسیر میونسپل کارپوریشن ملتان اقبال فرید کو اپنا نمائندہ مقرر کرتے ہوئے گورننگ باڈی کی مٹیننگ میں بھیج دیا اس موقع پر اقبال فرید نے ایم ڈی اے کی جانب سے واسا ڈسپوزل اسٹیشن کی فروخت کی مخالفت کرتے ہوئے مؤقف اپنایا کہ یہ اراضی سرے سے فروخت ہی نہیں ہو سکتی اور نہ ہی اس کی موجودہ حثیت تبدیل ہو سکتی ہے اسی طرح کمشنر ملتان کے نمائندے نے آفیسرز کالونی کے پلاٹوں سات ای اور دو ای کے حوالے سے بھی اختلافی نوٹ لکھا معلوم ہوا ہے اس نوٹ کا ڈی جی ایم ڈی اے نے سخت برا منایا انھوں نے ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل ایم ڈی اے چوہدری انور کے ذریعہ کمشنر ملتان کو براہ راست نشانہ بنانے کی بجائے ان ڈائریکٹ وار کیا اور اے ڈی جی ایم ڈی اے کے ذریعہ کمشنر ملتان کے نمائندے کو ایک لیٹر لکھوا کر اپنی تمام سفارشات واپس لینے کا کہا ہے بتایا گیا ہے کمشنر ملتان کی ہدایات پر انکے نمائندہ کی جانب سے بھجوائی گئے کمنٹس نے ایم ڈی اے میں ایک ارب روپے کی پراپرٹی پر ہاتھ صاف کرنے والوں کا منصوبہ ناکام ہو کر رہ گیا ہے۔

اختلافی نوٹ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -