ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کا امریکہ کے ہاتھوں قتل، اقوام متحدہ کی تفتیش کار کا موقف سامنے آگیا

ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کا امریکہ کے ہاتھوں قتل، اقوام متحدہ کی تفتیش کار ...
ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کا امریکہ کے ہاتھوں قتل، اقوام متحدہ کی تفتیش کار کا موقف سامنے آگیا

  

جنیوا(ڈیلی پاکستان آن لائن)ایرانی پاسداران انقلاب کےکمانڈرجنرل قاسم سلیمانی کے امریکہ کے ہاتھوں قتل پراقوام متحدہ کی تفتیش کارکاموقف سامنے آگیا، اگنس کالامارڈ نے امریکی حملے کی مذمت کرتے ہوئے اسے غیر قانونی اقدام اور عالمی قوانین کی خلاف ورزی قرار دے دیا۔

العربیہ کی ایک رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ کی تفتیش کار کے مطابق امریکہ ایرانی جنرل کے قتل کا جواز پیش کرنے میں ناکام رہا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق کالا مارڈ نے کہا کہ گذشتہ جنوری میں عراق میں امریکی فوج کی کارروائی کے دوران ایرانی قدس فورس کے سربراہ قاسم سلیمانی اور نو دیگر افراد کی ہلاکت ایک غیرقانونی اقدام اور بین الاقوامی قانون کی خلاف ورزی تھی۔

کالامارڈنےمزیدکہاامریکا بغداد ہوائی اڈے سے نکلنے والے ایرانی کمانڈر قاسم سلیمانی کے قافلے پر حملے جواز پیش کرنے اور یہ ثابت کرنے میں ناکام رہاہےکہ سلیمانی امریکا کے مفادات کے لیے مسلسل یا عنقریب خطرہ تھے۔

کالامارڈ کے یہ الفاظ ایک رپورٹ میں سامنے آئے ہیں جس میں انہوں نے ڈرون طیاروں سے لوگوں کو نشانہ بنا کر ہلاک کرنے کے طریقہ کار کو غیرانسانی قرار دیتے ہوئے ڈرون طیاروں اور اس طرح کے ہتھیاروں کے استعمال پر پابندی عاید کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ جب ڈرون کے استعمال کی بات کی جائے تو دنیا ایک نازک وقت اور ایک ممکنہ اہم موڑ سے گزر رہی ہے۔ سلامتی کونسل اس سلسلے میں فیصلے نہیں لیتی۔ افسوس کا امر یہ ہے کہ عالمی برادری اس حوالے سے چار و ناچار خاموش ہے۔

جمعرات کے روز کالامارڈ اپنی آزادانہ تحقیقات کے نتائج انسانی حقوق کونسل کے سامنے پیش کریں گی جس کے بعد رکن ممالک کو اس بات پر تبادلہ خیال کا موقع ملے گا کہ وہ دو سال قبل کونسل سے دستبردار ہونے والے امریکا کے خلاف کیا کارروائی کرے گی۔

خیال رہے جنرل قاسم سلیمانی بغداد میں کیے گئے ایک راکٹ حملے میں دیگر ساتھیوں سمیت جاں بحق ہوگئے تھے۔

ان کے قتل پر امریکہ اور ایران کے درمیان کشیدی انتہا پر پہنچ گئی تھی۔ جب کہ ایران نے بغداد میں موجود امریکی فوجی اڈے پر حملہ کرکے کئی فوجیوں کو زخمی بھی کردیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -