’اُس نے ہمارا بستر فضلے سے بھردیا تو میں نے طلاق کا فیصلہ کرلیا‘ ہالی ووڈ کے معروف فلمی جوڑے کے درمیان طلاق کا مقدمہ مزید سنگین ہوگیا

’اُس نے ہمارا بستر فضلے سے بھردیا تو میں نے طلاق کا فیصلہ کرلیا‘ ہالی ووڈ کے ...
’اُس نے ہمارا بستر فضلے سے بھردیا تو میں نے طلاق کا فیصلہ کرلیا‘ ہالی ووڈ کے معروف فلمی جوڑے کے درمیان طلاق کا مقدمہ مزید سنگین ہوگیا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی اداکار جانی ڈیپ اور ان کی اہلیہ اداکارہ امبر ہرڈ کی طلاق کا معاملہ عدالت میں ہے اور دونوں ایک دوسرے پر ایسے الزامات کی بوچھاڑ کر رہے ہیں کہ کسی بھی ہالی ووڈ جوڑی کی یہ بدترین طلاق ثابت ہو رہی ہے۔ اب جانی ڈیپ نے امبر ہرڈ کو طلاق دینے کی ایسی کریہہ وجہ بتا دی ہے کہ سن کر ہر ایک کا جی تو خراب ہو گا ہی مگر یقین کرنا بھی مشکل ہو جائے گا۔ میل آن لائن کے مطابق جانی ڈیپ نے کہا ہے کہ اس نے امبر ہرڈ کو طلاق دینے کا فیصلہ اسی روز کر لیا تھا جب امبر نے بیڈ میں ہی پاخانہ کر دیا تھا۔

رپورٹ کے مطابق جانی ڈیپ کاکہنا تھاکہ ” امبر ہرڈ نے یہ کریہہ حرکت ایک ’پرینک‘ کے طور پر کی تھی مگراس کی اس حرکت کی وجہ سے مجھے اس سے انتہائی کراہت آنے لگی اور میں نے اسے چھوڑنے کا فیصلہ کر لیا۔“ رپورٹ کے مطابق جانی اور امبر کی طلاق کا معاملہ لندن ہائیکورٹ میں زیرسماعت ہے جہاں دونوں کی طرف سے ایک دوسرے پر بدترین تشدد کے الزامات بھی عائد کیے گئے ہیں۔ جانی کہتا ہے کہ امبر اس پر تشدد کرتی تھی اور امبر کہتی ہے جانی اسے مارپیٹ کا نشانہ بناتا تھا۔ تاہم دونوں طرف سے ایک دوسرے کے الزامات کی تردید کی گئی ہے۔ اس کے علاوہ بھی دونوں ایک دوسرے پر ناجائز تعلقات سمیت نجانے کیا کچھ الزامات عائد کر رہے ہیں۔واضح رہے کہ 57سالہ جانی ڈیپ اور 34سالہ امبر ہرڈ کی شادی 2015ءمیں ہوئی تھی اور شروع سے ہی ان کے رشتے میں دراڑیں پڑنی شروع ہو گئیں۔ 2017ءمیں دونوں الگ ہو گئے اور اب طلاق کے لیے انہوں نے عدالت سے رجوع کر رکھا ہے۔

مزید :

تفریح -