جام پور، حکام کی غفلت سے متعدد فلٹریشن پلانٹس ناکارہ، لوگوں کا احتجاج

جام پور، حکام کی غفلت سے متعدد فلٹریشن پلانٹس ناکارہ، لوگوں کا احتجاج

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
 راجن پور(ڈسٹرکٹ رپورٹر) 2010کے سیلاب کے بعد جام پور کے زیرزمین پانی خراب ہونے کے باعث لاکھوں روپے خرچ کرنے کے باوجود ایک درجن سے زائد لگائے گئے واٹر فلٹریشن پلانٹ میں سے آدھے ناکا رہ ہو گئے محکمہ پبلک ہیلتھ تمام تر ذمہ داری بلدیہ جام پور پر ڈالنے لگی  تفصیل کے مطابق جام پور شہر کا زیر زمین پانی 2010میں آنے والے سیلاب کے (بقیہ نمبر14صفحہ6پر)
باعث کڑو ا ہو گیا تھا اور عوامی شدید احتجاج و مطالبہ کے باوجود لاکھوں روپے خرچ ہوئے اور ایک درجن سے زائد واٹر فلٹریشن پلانٹ نصب کیے گئے کو یوں ہی بغیر عملہ و دیکھ بھال کے ہی چھوڑ دیا گیا جس کی وجہ سے آج نصف درجن سے زائد بند پڑے ہیں اور شہری و ہی کڑوا و مہلک پیٹ، معدے کے امراض، کالا یرقان میں مبتلا کرنے والے پانی پینے پر مجبور ہیں جس پر شہریوں، عوامی، سماجی حلقوں غلام مصطفی، محمد سجاد، محمد کاشف، عمران احمد، محمد وسیم، محمد سلیم، محمد یوسف و دیگر نے شدید احتجاج کرتے ہوئے کمشنر ڈیرہ غازیخان، ڈی سی راجن پور اور اسسٹنٹ کمشنر جام پور سے اصلاح احوال کا مطالبہ کیا ہے۔
احتجاج