قومی خزانہ کو نقصان پہنچانے والے رجسٹری محررز کی فہرستیں تیار کرنے کا فیصلہ 

قومی خزانہ کو نقصان پہنچانے والے رجسٹری محررز کی فہرستیں تیار کرنے کا فیصلہ 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 لاہور(عامر بٹ سے) رجسٹریشن برانچوں میں سرکاری فیسوں کے غبن میں ملوث رجسٹری محرروں کی بار بار تعیناتی اور حکومتی خزانے کو وقفے وقفے سے نقصان پہنچانے والے افسران کی فہرست تیار کرنے کا فیصلہ، سینئر ممبر بورڈ آف ریونیو پنجاب بابر حیات تارڑ نے کرپٹ عناصر کے خلاف سخت قانونی کارروائی کرنے کا عندیہ دیدیا۔ روزنامہ پاکستان کو ملنے والی معلومات کے مطابق صوبائی درالحکومت سمیت صوبے بھر میں ایسے رجسٹری محرر اور سب رجسٹرار جنہوں نے دوران سروس سرکاری فیسوں کو خزانے میں جمع نہیں کروایا ان کے خلاف کاروائی کا آغاز کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔بورڈ آف ریونیو کے ایک اجلاس میں اس بات کو یقینی بنانے کا عندیہ دے دیا گیا ہے کہ سرکاری فیسوں کے غبن میں ملوث رجسٹری محرر و سب رجسٹرار صاحبان کے خلاف ریفرنس بنوائے جائیں۔ قابل ذکر بات یہ ہے کہ سرکاری فیسوں کے غبن میں ملوث اہلکاروں کو بار بار پوسیٹنگ دی گئی، 2010 سے لیکر 2021 تک بری شہرت کے حامل ان رجسٹری محرر کے کون کون سے افسر سفارشی تھے اور سب رجسٹرار کی تعیناتی میں کون کون افسر شامل رہا کی فہرست بھی مرتب کی جائے گی۔سرکاری فیسوں کو غبن کرنے والے اہلکار جتنے مجرم ہیں ْان کی پشت پناہی کرنے والے افسران بھی اتنے ہی ذمہ دار ہیں اس لئے ان پر بھی ریفرنس بنائے جائیں گے۔ اینٹی کرپشن اور نیب کو کیسز بھجوائے جائیں گے۔اس حوالے سے سینئر ممبر نے سرکاری خزانے میں جمع نہ ہونے والے ریونیو کی وصولی کیلئے سخت احکامات جاری کر دئیے کرپٹ اہلکاروں کے خلاف محاسبہ کرنے کا بھی عندیہ دیدیا ۔