شادی کی تقریب میں دولہے کو ہتھکڑی لگ گئی لیکن پھر دولہن نے ایسا کا م کیا کہ جس کی کوئی توقع بھی نہیں کر سکتا

شادی کی تقریب میں دولہے کو ہتھکڑی لگ گئی لیکن پھر دولہن نے ایسا کا م کیا کہ جس ...
شادی کی تقریب میں دولہے کو ہتھکڑی لگ گئی لیکن پھر دولہن نے ایسا کا م کیا کہ جس کی کوئی توقع بھی نہیں کر سکتا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

برمنگھم (نیوز ڈیسک) عین شادی کے موقع پر دولہا گرفتار ہوجائے تو دلہن کے دل پر کیا بیتے گی، اس کا اندازہ لگانا مشکل نہیں، لیکن ایک برطانوی جوڑے کے ساتھ یہی واقعہ پیش آیا تو دلہن کے ردعمل نے دولہے سمیت سب کو حیران کردیا۔

سارہ اور الیسٹیر کی شادی کی تقریب آئل آف سیلی کے ایک چرچ میں منعقد کی گئی اور جب تقریب کے بعد دولہا اور دلہن نے چرچ کے صدر دروازے سے باہر قدم رکھا تو دو پولیس والوں نے دولہے الیسٹیر کو ہتھکڑیاں پہنا دیں۔ اگرچہ یہ منظر دیکھ کر مہمان پریشان ہوگئے لیک دلہن نے پریشان ہونے کی بجائے قہقہے لگانا شروع کردیے، جبکہ اپنی گرفتاری پر دلہن کو ہنستا دیکھ کر دولہا بہت مایوس نظر آیا۔

اگرچہ یہ منظر بظاہر بہت افسوسناک نظر آتا ہے لیکن حقیقت کا انکشاف مقامی پولیس نے سوشل میڈیا ویب سائٹ فیس بک پر پوسٹ کئے گئے اپنے ایک پیغام میں کیا۔ سیلی پولیس کے سارجنٹ پولین ٹیلر نے فیس بک پر ایک پیغام میں لکھا، ”چھ ماہ قبل الیسٹیر نے ہم سے رابطہ کرکے کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ اس کی شادی کی تقریب کو سیلی پولیس بھی رونق بخشے، لیکن اس نے یہ واضح نہیں کیا تھا کہ پولیس شادی میں کس مقصد کے لئے آئے۔ ہم نے الیسٹیر کی خواہش پوری کرنے کے لئے شادی کے موقع پر چرچ پہنچ کر اسے پولیس کا وقت ضائع کرنے کے جرم میں گرفتار کرلیا۔ اس کی دلہن کے چہرے پر آنے والی مسکراہٹ نے اسے بہت دکھی کیا۔“

الیسٹیر کا کہنا ہے کہ پولیس نے اس کی فرمائش پوری کرنے کے لئے چھوٹا سا ڈرامہ کیا جس پر وہ بہت خوش ہے، لیکن اپنی دلہن سے خوشی کے ردعمل کی بالکل توقع نہیں کررہا تھا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس