سنی تحریک کابرما میں مسلمانوں کے قتل و غارت گری پر احتجاجی مظاہرہ

سنی تحریک کابرما میں مسلمانوں کے قتل و غارت گری پر احتجاجی مظاہرہ

لاہور(خبر نگارخصوصی)پاکستان سنی تحریک کے زیر اہتمام پریس کلب کے باہر برما میں مسلمانوں کے ساتھ ہونے والی قتل و غارت گری پر احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے ڈویژن صدر مولانا مجاہد عبدالرسول خان ، سردار محمد طاہر ڈوگر، شیخ محمد نواز قادری و دیگر رہنماؤں نے کہا کہ برما میں مسلمانوں پر ہو نیوالے مظالم پر پوری دنیا میں خاموشی شرمنا ک ہے۔ ہزاروں مسلمان پناہ کی تلاش میں سمندر میں بھٹک رہے ہیں مگر کوئی ملک انہیں قبول کرنے کے لیے تیار نہیں ۔عالمی برادری روہنگیا کے مسلمانوں کے تحفظ کیلئے برماکی حکومت پر دباؤ بڑھائے۔ اقوام متحدہ فوری طور پر اس مسئلے کے حل کے لیے آگے بڑھے اور میانمار کو پابند کیا جائے کہ وہ روہنگیائی مسلمانوں کی ملک بدری کا فیصلہ واپس لے اور انھیں برما میں رہنے کی اجازت دی جائے ۔ برما کے روہنگیائی مسلمان دنیا کی مظلوم ترین اقلیت ہیں،تمام مسلم حکمران برما کے مظلوم مسلمانوں کو امداد بھجوائیں۔دوزی قبائل کے دہشتگردبرما میں مسلمانوں کی نسل کشی کررہے ہیں جبکہ وہاں کی حکومت مظلوم مسلمانوں کا ساتھ دینے کے بجائے انہیں اپنا شہری بھی تسلیم کرنے کو تیار نہیں۔انہوں نے کہاکہ اس وقت عالمی سامراجی طاقتیں مسلمانوں کو صفحہ ہستی سے مٹانے کیلئے متحد ہوچکی ہیں اور کشمیر ،فلسطین کے بعد اب برما میں نہتے مسلمانوں کا قتل عام کیا جارہاہے ،برما میں مسلمانوں پر ظلم و جبر کی نئی تاریخ رقم کی جارہی ہے لیکن دوسری طرف ڈیڑھ ارب سے زائد مسلمان اور 54سے زائد اسلامی ممالک کے حکمران خاموش تماشائی کا کردار ادا کررہے ہیں جو کہ دراصل مجرمانہ غفلت ہے ۔اسلامی ممالک کے سربراہان ، او آئی سی ممبر ممالک برما کے مسلمانوں کے تحفظ کے لیے آواز بلند کریں تاکہ مسلم بھائی چارے کی فضا قائم اوراپنے بھائیوں کی جان و مال ، عزت و آبروکا تحفظ یقینی بنایا جاسکے۔اس موقع پر مفتی محمد حسیب عطاری ، علامہ ریاض ہزاروی ، علامہ سرفراز سیالوی ، مفتی محمد سلیم نقشبندی، علامہ شریف الدین قذافی، علامہ رمضان قادری سمیت دیگر رہنماؤں نے شرکت کی ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1