روہنگیا مسلمانوں کی ہر طرح سے مدد مسلم امہ پر فرض عین ہے،پروفیسر عبدالستار

روہنگیا مسلمانوں کی ہر طرح سے مدد مسلم امہ پر فرض عین ہے،پروفیسر عبدالستار

لاہور(پ ر) مرکزی جمعیت اہل حدیث پنجاب کی اپیل پر برما میں روہنگیا مسلمانوں پر انسانیت سوز مظالم کے خلاف گوجرانوالہ‘ وزیر آباد‘ سیالکوٹ‘ فیصل آباد‘ قصور‘ راولپنڈی‘ ملتان سمیت دیگر شہروں میں احتجاجی ریلیاں اور مظاہرے کیے گئے۔ گوجرنوالہ‘ وزیر آباد‘ پتوکی میں احتجاجی ریلیوں سے خطاب کرتے ہوئے پروفیسر عبدالستار حامد‘ مولانا محمد نعیم بٹ‘ میاں محمود عباس‘ پروفیسر سعید کلیروی‘ مولانا محمد ابرار ظہیر ودیگر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے مسلم ممالک کے حکمرانوں سے مطالبہ کیا کہ روہنگیا مسلمانوں پر مظالم کو رکوایا جائے اور انہیں برما میں شہری وانسانی حقوق دلوائے جائیں۔ برمی مسلمانوں پر ہونے والے مظالم انسانیت کے ماتھے پر کلنک کا ٹیکہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دنیا بھر میں مسلمانوں پر ظلم کے پہاڑ ڈھائے جا رہے ہیں اس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔ موجودہ حالات میں مسلمانان عالم پر یہ ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ ایک پلیٹ فارم پر متحد ہو جائیں۔ مولانا محمد نعیم بٹ‘ میاں محمود عباس نے کہا کہ روہنگیا مسلمانوں کی ہر طرح سے مدد مسلم امہ پر فرض عین ہے۔ پریشان حال روہنگیا مسلمان ’’محمد بن قاسم‘‘ جیسے مسیحا کے منتظر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ برما کے مسلمانوں کے قتل عام کے ذریعے نسل کشی کے غیر انسانی فعل پر اقوام متحدہ‘ انسانی حقوق کی این جی اوز کی خاموشی شرمناک ہے۔ حکومت پاکستان کا روہنگیا مسلمانوں کے مسئلے کو سلامتی کونسل میں لے جانے کا فیصلہ خوش آئند ہے۔ مگر حکومت کو چاہیے کہ وہ روہنگیا مسلمانوں کو برما کے شہری وانسانی حقوق دلانے میں ’’فرنٹ مین‘‘ کا کردار ادا کرے۔ احتجاجی ریلیوں میں شرکاء نے برمی حکومت اور بدھسٹوں کے خلاف بینرز اور پلے کارڈز بھی اٹھا رکھے تھے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1