بجٹ کے نام پربیچارے عوام پرشب خون ماراگیا،اشرف بھٹی

بجٹ کے نام پربیچارے عوام پرشب خون ماراگیا،اشرف بھٹی

لاہور(جنرل رپورٹر)پاکستان پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما محمداشرف بھٹی نے کہا ہے کہ بجٹ کے نام پربیچارے عوام پرشب خون ماراگیا۔مایوس کن بجٹ آنے سے غربا زندہ درگورہو جائیں گے جبکہ سرمایہ داروں کی چاندی ہوجائے گی ۔مرغی کاگوشت تومہنگاہوناہی تھا کیونکہ اس کاکنٹرول بھی حکمرانوں کے اپنے چہیتوں کے ہاتھوں میں ہے۔جس بجٹ کوآئی ایم ایف نے سراہاہووہ غریب نوازنہیں ہوسکتا۔وفاقی بجٹ کے اعدادوشمار آئی ایم ایف کی ڈکٹیشن کے آئینہ دار ہیں۔وہ بلھے شاہ روڈپرایک تقریب سے خطاب کررہے تھے۔محمداشرف بھٹی نے مزیدکہا کہ بجٹ کی صورت میں عوام دشمن حکمرانوں کاحبث باطن ظاہرہوگیا۔شریف برادران کے دورمیں عزت سے زندہ رہنا ایک بڑاچیلنج بن گیا ہے انہوں نے کہا کہ انتہائی بے شرمی اورڈھٹائی کے ساتھ اس بجٹ کوعوام دوست قراردیا جارہا ہے۔نااہل حکمران عوام سے پوچھ کردیکھیں اس بجٹ کی صورت میں ان پرکیا قیامت ٹوٹ پڑی ہے۔انہوں نے کہا کہ اگرحکمران عوام کے منتخب اوران کے ساتھ مخلص ہوتے توانہیں زندہ درگور نہ کرتے ۔ تنخواہوں میں صرف سات جبکہ مہنگائی میں سات سوفیصد اضافہ کردیا گیا ہے ، عوام اپنے بنیادی حقوق سے محرومی کے سبب مجرم بن رہے ہیں ۔اس کے باوجودحکمرانوں کایہ کہنا ''متوازن بجٹ پیش کیاگیا ''شرمناک اورسفیدجھوٹ ہے ۔انہوں نے کہا کہ سفیدجھوٹا بولنا حکمرانوں کی ضرورت اورپرانی عادت ہے ،اس بری عادت سے ان کے چہرے کالے ہوگئے ہیں۔جعلسازی ،جھوٹ اورلفاظی سے حکمرانوں کے کالے کرتوت نہیں چھپ سکتے ۔انہوں نے کہا کہ حکمران مسلسل دوبرسوں سے عوام کاخون چوس رہے ہیں،پنجاب میں بدتین مہنگائی جعلی خادم پنجاب کی ملی بھگت کاشاخسانہ ہے ۔حکمرانوں کے کاروباری ادارے چمک رہے ہیں جبکہ مزدوروں اورہنرمندوں کودووقت کی روٹی سمیت روزگاربھی دستیاب نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی عوام کی ترجمان اوران کے حقوق کی نگہبان ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1