رمضان المبارک سے قبل شہر کو تجاوزات سے پاک کرنے کا خصوصی ٹاسک ٹاؤن کے سپرد

رمضان المبارک سے قبل شہر کو تجاوزات سے پاک کرنے کا خصوصی ٹاسک ٹاؤن کے سپرد

لاہور(جاویدا قبال)ضلعی حکومت نے صوبائی دارلحکومت کو رمضان المبار ک سے قبل تجاوزات سے پاک کرنے کا خصوصی ٹاسک ٹاؤنوں کے سپرد کر دیا ہے۔جس کے تحت ہر ٹاؤن کے ایڈمنسٹریٹر اور ٹی ایم او کو حکم دیا گیا ہے کہ وہ رمضان المبارک سے2روز قبل تک اپنے اپنے تمام ٹاؤنوں کی حدود میں واقع سٹرکوں بازاروں ،مارکیٹوں اور پلازوں کو تجاوزات سے پاک کرنے کیلئے خصوصی ٹیمیں تشکیل دیں اور ہر ٹاؤن مارننگ اور ایوننگ تجاوزات کیخلاف سکواڈ تشکیل دیں اور صبح اور شام کے اوقات میں تمام ٹاؤنوں میں تجاوزات کیخلاف فوری آپریشن کلین اپ شروع کریں ۔بتایا گیا ہے کہ تمام ٹاؤنوں کے ایڈمنسٹریٹر سے کہا گیا ہے کہ کہ وہ تجاوزات قائم کروانے والے افسروں اور اہلکاروں کی خفیہ معلومات بھی فراہم کریں ۔بتایا گیا ہے کہ ڈی سی او لاہورکیپٹن(ر)محمد عثمان کے علم میں لایا گیا تھا کہ ٹاؤنوں کی انتظامیہ کی خاموشی کے باعث پورا شہر تجاوزات کی منڈی میں تبدیل ہو چکا ہے۔جس کے ذمہ دار مختلف ٹاؤں کے ٹاؤن آفیسر ریگولیشن اور ان کا ماتحت عملہ ہے جبکہ بعض علاقوں میں تجاوزات مسلم لیگ(ن)کے ٹاؤنوں میں کوآرڈینیٹروں اور مختلف ایم پی ایز کے کارندوں کے پیدا کردہ ہیں جو تجاوزاتیوں سے منتھلیاں لیتے ہیں اگر تجاوزات ختم نہ کیے گئے تو رمضان میں اس حد تک بڑھ جائیں گے کہ شہر کی سٹر کیں اور بازار سکٹر جائیں گے جبکہ بازاروں سے گزرنا بھی مشکل ہو جائے گا اور رش کے باعث دہشتگردوں کو بھی آسانی ہو سکتی ہے۔جس پر تمام ٹاؤنوں کو مراسلہ جاری کیا گیا ہے کہ وہ سیاسی دباؤ کو خاطر خواہ میں نہ لائیں اور فوری طور پر آپریشن کلین اپ کا آغاز کریں اور صبح اور شام کے الگ الگ سکواڈ تشکیل دیئے جائیں جو کہ 24گھنٹوں میں شروع کیا جائے اور سڑکوں اور رش والی جگہوں کو فوری طور پر تجاوزات سے پا ک گیا جائے۔جس پر ٹی ایم اوز کاکہنا ہے کہ ٹیمیں بنا دی ہیں جو کام کر رہی ہیں اور جلد مستقل بنیادوں پر تجاوزات ہٹا دیئے جائیں گے اور سامان قبضہ میں لیکر بعد میں اس کی نیلامی کی جائے گی اور ایک بار منع کرنے کے بعد دوبارہ تجاوزات قائم کرنے والوں کیخلاف مقدمہ درج کرایا جائے گا۔اس حوالے سے ڈی سی او لاہور کا کہنا ہے کہ رمضان المبارک سے قبل تجاوزات ختم کرنے کا حکم دیا ہے اور جو ٹاؤن ناکام ہوئے اس کے ٹی ایم او کیخلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1