ترکی انتخابات ،حکمران جماعت اکثریت سے محروم

ترکی انتخابات ،حکمران جماعت اکثریت سے محروم
ترکی انتخابات ،حکمران جماعت اکثریت سے محروم

  

انقرہ(مانیٹرنگ ڈیسک) ترکی کے صدر رجب طیب اردوگان کی جماعت جسٹس اینڈ ڈیویلپمنٹ پارٹی 13 برسوں میں پہلی مرتبہ پارلیمنٹ میں اکثریت سے محروم ہوگئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق صدر طیب اردوگان ترکی میں صدارتی نظام کے نفاذ کے خواہشمند تھے، جس کے لیے انہیں دو تہائی اکثریت کی ضرورت تھی۔ لیکن انتخابات کے نتائج سے انہیں شدید مایوسی کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ترکی کی پارلیمنٹ میں اکثریت کے حصول کے لیے 276 نشستیں درکار ہوتی ہیں، لیکن جسٹس اینڈ ڈیویلپمنٹ پارٹی کو 258 نشستیں مل سکی ہیںتاہم اب حکمران جماعت کو اپنا اقتدار برقرار رکھنے کے لیے کسی دوسری پارٹی سے اتحاد کرنا ہوگا۔اس مرتبہ انتخابات کی حیران کن بات یہ ہے کہ کردوں کی حامی پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کو پہلی مرتبہ دس فیصد سے زیادہ ووٹ حاصل ہوئے ہیں۔

یاد رہے کہ اردوگان نے 2003ءمیں بطور وزیر اعظم ترکی کا اقتدار سنبھالا تھا، گزشتہ سال وہ صدر منتخب ہوئے تھے۔واضح رہے کہ اس پارٹی کو پارلیمنٹ میں پہنچنے کے لیے دس فیصد ووٹ حاصل کرنا ضروری تھا۔

مزید : بین الاقوامی /اہم خبریں