آرمی چیف کی زیر صدرات سول و عسکری حکام کا اجلاس ، قومی مفادات کا ہر صورت میں تحفظ کرنے کا عزم

آرمی چیف کی زیر صدرات سول و عسکری حکام کا اجلاس ، قومی مفادات کا ہر صورت میں ...

 راولپنڈی (آن لائن)آرمی چیف جنرل راحیل شریف کی زیر صدارت اعلیٰ سول و عسکری قیادت کا اجلاس ہوا۔ اجلاس میں ملک کے مجموعی داخلی وخارجی صورتحال ،خطے کی سکیورٹی سمیت پاک چین اقتصادی راہداری ،ملک کی اندرونی اور بیرونی سلامتی کے صورتحال پر جائزہ لیا گیا ہے۔ اجلاس کے شرکا نے امریکی ڈرون حملے کو ملکی سالمیت اور خودمختاری کے خلاف قرار دیا اور ملکی خوشحالی ، استحکام کے خلاف دشمنوں کی سازشوں کا نوٹس لے کر انہیں ناکام بنانے کا عزم کا اظہار کیا۔ترجمان آئی ایس پی آر کے مطابق منگل کے روز راولپنڈی جی ایچ کیو میں آرمی چیف جنرل راحیل شریف کے زیر صدارت قومی سلامتی کے معاملات پر اعلیٰ سول و عسکری قیادت کا اجلاس ہوا۔ اجلاس میں ڈی جی آئی ایس آئی جنرل رضوان اختر اور دیگر عسکری حکام نے شرکت کی جبکہ سول حکام میں وزیر دفاع خواجہ محمد آصف ، وزیر خزانہ اسحاق ڈار، مشیر خارجہ سرتاج عزیز، وزیراعظم کے معاون خصوصی طارق فاطمی ، سیکرٹری خارجہ اعزاز چوہدری سمیت قومی سلامتی کے مشیر ناصر جنجوعہ نے شرکت کی۔ اجلاس میں 21مئی کے امریکی ڈرون حملے پر متفقہ طور پر تشویش کا اظہار کیا گیا اور حملے کو پاکستان کی سالمیت اور خودمختاری کے خلاف قرار دیا اور کہا گیا کہ اس طرح کے حملوں سے پاک امریکا باہمی تعلقات سمیت پاک افغان مفاہمتی عمل شدید متاثر ہو سکتا ہے۔ اجلاس میں آپریشن ضرب عضب کے حوالے سے بھی تبادلہ خیال ہوا اور اس عزم کا اظہار کیا گیا کہ آپریشن ضرب عضب کے ثمرات کو ضائع ہونے نہیں دیں گے۔ اجلاس کے شرکاء نے افغانستان میں امن و امان کے قیام کے لئے افغان مفاہمتی عمل کو جاری رکھنے پر اتفاق کیا گیا جبکہ سی پیک کے سکیورٹی کے حوالے سے بھی بات چیت کی۔ اجلا س میں ملک کی خوشحالی، استحکام کیخلاف دشمن کی سازشوں کا نوٹس بھی لیا اور اس عزم کا اعادہ کیا گیا کہ ملک کے قومی مفادات کا ہر صورت میں تحفظ کریں گے۔

آرمی چیف

مزید : کراچی صفحہ اول