آدمی کے موبائل فون نے اُسے سرعام برہنہ ہونے پر مجبور کردیا

آدمی کے موبائل فون نے اُسے سرعام برہنہ ہونے پر مجبور کردیا
آدمی کے موبائل فون نے اُسے سرعام برہنہ ہونے پر مجبور کردیا

  

بیجنگ (نیوز ڈیسک)آج کے دور میں تقریباً ہر شخص موبائل فون استعمال کررہا ہے اور ایسے میں یہ بات تشویش سے خالی نہیں کہ موبائل فون پھٹنے کے واقعات میں بھی روز بروز اضافہ ہوتاجارہا ہے۔ تازہ ترین پریشان کن خبر چین سے آئی ہے جہاں ووہان صوبے سے تعلق رکھنے والا یانگ نامی شخص سڑک کنارے چہل قدمی کر رہا تھا کہ اچانک اس کا سام سنگ موبائل فون اس کی پتلون کی جیب میں پھٹ گیا۔

اخبار شوتیان میٹرو پولیس ڈیلی کی رپورٹ کے مطابق یانگ کو جیسے ہی اپنی پتلون کی پچھلی جیب جلتی ہوئی محسوس ہوئی تو اس نے خوفزدہ ہو کر سڑک پر ہی اپنی پتلون اتار پھینکی۔ اس کا کہنا تھا کہ جیب میں موبائل فون پھٹنے سے وہ اتنا ڈر گیا تھا کہ سر عام برہنہ ہونے کی بھی کوئی فکر نہ رہی۔

’ٹیچر نے اضافی نمبروں کیلئے اس شرمناک ترین کام پر مجبور کیا‘ ایسا واقعہ کہ ویڈیو سامنے آنے پر دنیا بھر کے لوگ غصے سے آگ بگولا ہوگئے

یانگ کی جلد موبائل فون پھٹنے سے جھلس گئی تھی جبکہ پتلون میں بڑا سوراخ ہوگیا اور اس نے آگ بھی پکڑلی تھی۔ شوتیان میٹرو پولس ڈیلی کا ایک فوٹوگرافر موقع پر پہنچا اور اس نے جلے ہوئے موبائل فون کی تصاویر بنائیں، جنہیں دیکھ کر اندازہ ہوتا ہے کہ یہ واقعی ایک خوفناک حادثہ تھا۔

یانگ کا کہنا ہے کہ اس نے سام سنگ کا موبائل فون SM-G9009ڈبلیو 2014ءمیں خریدا تھا ۔ اس کا کہنا ہے کہ موبائل فون زیادہ استعمال کرنے پر گرم ہوجایا کرتا تھا لیکن اس نے کبھی سوچا بھی نہیں تھا کہ کسی دن یہ اس کی جیب میںہی پھٹ جائے گا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس