طالبہ خدیجہ صدیقی پر حملے کے مقدمہ کا ریکارڈ ملزم کو فراہم کرنے کا حکم

طالبہ خدیجہ صدیقی پر حملے کے مقدمہ کا ریکارڈ ملزم کو فراہم کرنے کا حکم

لاہور(نامہ نگار)کینٹ کچہری کے جوڈیشل مجسٹریٹ مبشر حسن اعوان نے تفتیشی افسر کو چھریوں کے وار سے زخمی ہونے والی طالبہ خدیجہ صدیقی پر حملے کے مقدمہ کا ریکارڈ ملزم کو فراہم کرنے کا حکم دے دیا ہے۔ کینٹ کچہری کے جوڈیشل مجسٹریٹ نے مقدمہ کی سماعت کی۔ متاثرہ لڑکی خدیجہ صدیقی بھی عدالت میں پیش ہوئی۔ سماعت کے آغاز میں ہی ملزم کی جانب سے عدالت کو آگاہ کیا گیا کہ اسے مقدمے کا مکمل ریکارڈ فراہم نہیں کیا گیا۔ شفاف ٹرائل کے عمل کو یقینی بنانے کے لئے مقدمے کا تمام ریکارڈ فراہم کرنے کی ہدایت کی جائے جس پرعدالت نے تفتیشی افسر کو ہدایت کی کہ ملزم کو مقدمے کا ریکارڈ فراہم کیا جائے۔ملزم پر الزام ہے کہ اس نے طالبہ خدیجہ صدیقی پر اُس وقت چھری کے 21وار کئے جب وہ اپنی بہن کو سکول سے لینے کیلئے گئی تھی، چیف جسٹس نے طالبہ پر حملے کیس پر انتظامی نوٹس لیتے ہوئے ٹرائل عدالت کو اس مقدمے کی روزانہ کی بنیاد پر سماعت کرنے کا حکم دیاہے۔

مزید : علاقائی