لاہورہائیکورٹ نے 13بھٹہ مزدوروں کوبازیاب کرا کے رہا کر دیا

لاہورہائیکورٹ نے 13بھٹہ مزدوروں کوبازیاب کرا کے رہا کر دیا

لاہور(نامہ نگارخصوصی )لاہورہائیکورٹ نے 13 بھٹہ مزدوروں کوبازیاب کرا کے رہا کرنے اور بقایا23 بھٹہ مزدور بازیاب کرکے 9 جون کوپیش کرنے کاحکم دیا ہے ۔ جسٹس قاضی محمد امین احمد نینصیراحمد کی درخواست پرسماعت کی ،درخواست گزارکے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ پھولنگر کے بھٹہ مرزااقبال نے اس کے 36رشتے دارمزدوروں کوحبس بے جا میں رکھا ہوا ہے۔ وکیل کا کہناتھا کہ بھٹہ مزدوروں سے جبری مشقت کرائی جا رہی ہے۔عدالت کے حکم پرصرف 13بھٹہ مزدور بازیاب کروائے جاسکے ہیں جبکہ باقی بھٹہ مزدورں کو کسی دوسری جگہ منتقل کردیاگیا ہے۔ عدالت میں بھٹہ مالکان کے وکیل کا کہناتھا کہ وہ مزدوروں کو معاہدے کے مطابق اجرت دے رہے ہیں ، مزدوروں سے جبری مشقت لینے کاالزام درست نہیں، ان کے پاس صرف 13مزدورتھے جو عدالت میں پیش کردیئے گئے ہیں۔عدالت نے فریقین کے وکلاء کے دلائل سننے کے بعد بازیاب کرائے گئے 13مزدوروں کوآزاد کردیاجبکہ بقایا 23کو9 جون کو عدالت میں پیش کرنے کاحکم دیا ہے ۔

مزید : صفحہ آخر