اسلام آباد میں پولیو مہم کیلئے مزید افرادی قوت کاانتظام کیا جائے،سائرہ تارڑ

اسلام آباد میں پولیو مہم کیلئے مزید افرادی قوت کاانتظام کیا جائے،سائرہ تارڑ

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) وفاقی دارلحکومت میں پولیو مہم کو بہتر بنانے کے لیے مزید افرادی قوت کا انتظام کیا جائے،وزیر قومی صحت سائرہ افضل تارڑ نے پولیو کے حوالہ سے اعلیٰ سطحی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا ہے کہ وفاقی دارلحکومت میں پولیو مہم کو بہتر بنانے کے لیے مزید افرادی قوت کا انتظام کیا جائے۔اسلام آباد پولیو مہم کے مائیکرو پلان کا از سر نو جائزہ لیا جائے اور اسے اپ ڈیٹ کیا جائے۔ سی ڈی اے کے زیر انتظام علاقے میں پولیو کی رسائی 84 فیصد ہے جس کو فوری طور پر مزید بہتر بنانے کی ضرورت ہے۔ وزارت قومی صحت میں پولیو روک تھام کے جائزہ اجلاس میں سیکرٹری وزارت قومی صحت محمد ایوب شیخ، ایڈیشنل سیکرٹری ہیلتھ ڈاکٹر ہاشم پوپلزئی، ڈی جی ہیلتھ ڈاکٹر اسد حفیظ، ایڈیشنل ممبر پلاننگ سی ڈی اے ، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر اسلام آباد، ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز ، ڈی ایچ او اسلام آباد، جی ایچ کیو کے نمائندے اور عالمی تنظیموں کے نمائندوں نے شرکت کی۔ اس موقع پر وزیر قومی صحت نے کہا کہ پولیو مہم میں خواتین کی شمولیت کو یقینی بنایا جائے ، مہم میں 400 مزید رضا کاروں کی ضرورت ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسلام آبادمیں ہر گھر پر پولیو ٹیموں کی جانب سے مارکنگ کی جائے تاکہ پولیو کے قطرے پلانے کی تصدیق کی جا سکے۔ انہوں نے کہا کہ اسلام آباد میں پولیو مہم کے دوران E-11, F-11 اور G-13 سیکٹرز پرخصوصی توجہ کی ضرورت ہے۔سائرہ افضل تارڑ نے کہا کہ اسلام آباد میں پولیو مہم کی خود نگرانی کریں گی اور کسی صورت میں کوئی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی۔ اور کہا اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ پولیو مہم کے دوران کوئی بھی بچہ پولیو کے قطرے پینے سے محروم نہ رہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...