بلڈ پریشر کی جھوٹی خبر کیوں چلائی گئی ،یہ جے آئی ٹی ہے یا جیمز بانڈکی سنسنی خیز فلم: آصف کرمانی

بلڈ پریشر کی جھوٹی خبر کیوں چلائی گئی ،یہ جے آئی ٹی ہے یا جیمز بانڈکی سنسنی ...
بلڈ پریشر کی جھوٹی خبر کیوں چلائی گئی ،یہ جے آئی ٹی ہے یا جیمز بانڈکی سنسنی خیز فلم: آصف کرمانی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیر اعظم کے معاون خصوصی آصف کرمانی نے کہا ہے کہ یہ جے آئی ٹی ہے یا جیمز بانڈ زیرو زیرو سیون کی سنسنی خیز فلم۔ جوڈیشل اکیڈمی میں ایمبولینس کیوں منگوائی گئی اور بلڈ پریشر کی جھوٹی خبر کیوں چلائی گئی۔

نیو نیوز کے مطابق حسن نواز کی جے آئی ٹی کے سامنے دوسری پیشی کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا حسین صاحب جب جوڈیشل اکیڈمی میں چلے جاتے ہیں تو ان کا کسی سے رابطہ نہیں ہوتا تو پھر ان کی تصویر کس طرح لیک کی گئی۔”یہاں چڑی بھی پر نہیں مار سکتی، ایسے میں ایک تصویر لیک کردی جائے آخر اس کا مقصد کیا ہے“؟

انکا کہنا تھا کہ حسین نواز کی تصویر ویٹنگ ایریا کی نہیں انٹیروگیشن روم کی ہے۔ عدالت عظمیٰ تحقیق کرے کہ انٹیروگیشن روم کی تصویر کیسے لیک ہوئی۔ الحمد للہ ہمارے ہاتھ صاف ہیں، ہم اللہ پر یقین رکھتے ہیں، ہم اداروں کا احترام کرتے ہیں، تمام ادارے بھی آپس میں احترام رکھیں۔

رہنما ن لیگ نے بتایا کہ پی ٹی آئی میں شامل ہونے والوں کو 2013ءمیں عوام نے مسترد کردیا تھا، چینل پر بیٹھے کچھ لوگوں کی خواہش ہوسکتی ہے کہ تصادم ہو۔ ہم اداروں پر اعتماد اور یقین رکھنے والے ہیں ایسا کچھ نہیں ہوگا تاہم خدشات اور تحفظات ہم نے پہلے ہی سامنے رکھ دیے تھے۔

مسلم لیگی رہنما طارق فضل چودھری بھی پیچھے نہ رہے کہا کہ تصویر لیک ہونے پر ہمیں افسوس ہے ہم انصاف کیلئے آتے ہیں تصویر جاری کر کے ہماری تضحیک کی جاتی ہے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اداروں میں ٹکراو¿ یا محاذ آرائی کی باتیں من گھڑت ہیں۔ ایسی کوئی بات نہیں وزیراعظم نوازشریف عدالتوں کا احترام کرتے ہیں اور تمام اداروں کو ایک دوسرے کا احترام کرنا چاہیے۔

مزید :

قومی -