دو طلاقوں کے بعد بھی تنگ کرنے سے باز نہیں آرہی ،ہائی کورٹ میں شوہر کی دہائی ،بیوی کی درخواست مسترد

دو طلاقوں کے بعد بھی تنگ کرنے سے باز نہیں آرہی ،ہائی کورٹ میں شوہر کی دہائی ...
دو طلاقوں کے بعد بھی تنگ کرنے سے باز نہیں آرہی ،ہائی کورٹ میں شوہر کی دہائی ،بیوی کی درخواست مسترد

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی ) لاہورہائیکورٹ نے تین بچوں کوباپ کی تحویل سے لے کرماں کے حوالے کرنے کی درخواست مسترد کردی۔جسٹس چودھری عبدالعزیز نے رضیہ بی بی کی درخواست مسترد کرتے ہوئے قرار دیا کہ گارڈین کورٹ کے فیصلے کے خلاف اپیل ہوسکتی ہے لیکن حبس بے جا کی درخواست پر بچوں کی تحویل کے لئے ہائی کورٹ سے رجوع نہیں کیا جاسکتا۔

درخواست گزار خاتون کے وکیل نے موقف اختیارکیا کہ جلالپور بھٹیاں میں اس کے خاوند حیات نے گھرسے نکال کر تین بچے 13سالہ نثار،9سالہ احتشام،7سالہ امزلا کو چھین لیا ہے۔ انہوں نے عدالت سے استدعا کی کہ بچوں کو باپ کی تحویل سے لے کر ماں کے حوالے کرنے کا حکم دیا جائے۔عدالت نے بچوں کے باپ نے موقف اختیارکیا کہ بیوی کے آئے روز جھگڑوں سے تنگ آکراسے2طلاقیں دے چکا ہوں۔بچے بھی ماں کے پاس نہیں رہناچاہتے جبکہ گارڈین کورٹ بھی بچوں کا کیس میرے حق میں کرچکی ہے، باپ نے عدالت سے استدعا کی کہ بچے اس کے پاس رہنے کی اجازت دی جائے جس پر عدالت نے خاتون کی درخواست مسترد کردی۔

مزید :

جرم و انصاف -